راولپنڈی، انسداد دہشتگردی کی خصوصی عدالت نےانجم عقیل فرار کیس میں چونتیس ملزمان کو بری کردیا ۔

راولپنڈی، انسداد دہشتگردی کی خصوصی عدالت نےانجم عقیل فرار کیس میں چونتیس ملزمان کو بری کردیا ۔

مسلم لیگ نون کے رکن قومی اسمبلی انجم عقیل فرار کیس کی سماعت راولپنڈی میں انسداد دہشتگردی کی خصوصی عدالت نمبر ایک کے جج ملک محمد اکرم اعوان نے کی۔ انجم عقیل اورمقدمے کے چونتیس ملزمان کو عدالت میں پیش کیا گیا۔ پولیس نے عدالت سے ملزمان کو بری کرنے کی درخواست کرتے ہوئے بتایا کہ تفتیش کے دوران ملزمان کے خلاف شواہد نہیں ملے۔ عدالت نے چونتیس ملزمان کے خلاف مقدمہ خارج کرتے ہوئے انہیں بری کرنے کا حکم دے دیا ہے۔ تین ملزمان کو پولیس کی درخواست پر پہلے ہی بری کیا جاچکا ہے۔ عدالت نے مقدمے کی مزید سماعت تیس اگست تک ملتوی کرتے ہوئے پولیس کو آئندہ سماعت پر انجم عقیل سمیت سترہ ملزمان کے خلاف چالان پیش کرنے کی ہدایت کی۔ مسلم لیگ نون کے ایم این اے کو درجنوں افراد نےتھانہ شالیمار اسلام آباد پر حملہ کرکے پولیس کی حراست سے چھڑا لیا تھا۔ جس پر ان کے خلاف انسداد دہشتگردی اور تعزیرات پاکستان کی دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا گیا تھا۔