خیبر پی کے: خواجہ سراﺅں پر 2برس میں 300 حملے، پشاور کے 46 قتل

پشاور (نوائے وقت رپورٹ) پشاور میں 2 برس کے دوران 46 خواجہ سراﺅں کو قتل کر دیا گیا۔ خواجہ سراﺅں نے ہسپتال میں نامناسب سلوک کی بھی شکایت کی ہے۔ خواجہ سراﺅں کا موقف ہے کہ جب ہم اپنے زخمیوں کو ہسپتال لے کر جاتے ہیں تو مذاق اڑایا جاتا ہے۔ بروقت علاج نہیں کیا جاتا۔ گزشتہ دو سالوں میں صرف خیبر پی کے میں خواجہ سراﺅں پر 300 کے لگ بھگ حملے ہوئے جس میں 46 اموات ہوئیں۔
46 ہلاک