اخلاص فی العمل

کالم نگار  |  رضا الدین صدیقی
اخلاص فی العمل

٭ حضرت معاذ بن جبل رضی اللہ عنہ روایت کرتے ہیں حضور اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا : اپنے دین کو (اللہ کے لیے ) خالص کو لو تمہیں تھوڑا عمل بھی کفایت کرجائے گا۔ (مستدرک )
٭ حضرت ابو امامہ رضی اللہ عنہ روایت کرتے ہیں حضور اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا: اللہ تبارک وتعالیٰ فقط اسی عمل کو قبول فرماتا ہے جو اس کے لیے خالص ہو اور جس کے ذریعے سے اسکی رضاطلب کی گئی ہے۔(سنن نسائی)
٭حضرت ابو ہریرہ رضی اللہ عنہ روایت کرتے ہیں حضور اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا ۔اللہ تمہاری صورتوں کو نہیں دیکھتا اور نہ ہی تمہارے اموال کو بلکہ وہ تمہارے دلوں اور تمہارے اعمال کو دیکھتا ہے۔(مسلم،ابن ماجہ)
٭ حضرت انس بن مالک روایت کرتے ہیں جنابِ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا: ایک ذات(اللہ ) کے لیے عمل کرو تمام ذاتوں سے تمہاری کفایت ہوجائے گی ۔ (دیلمی)
٭ حضرت ابودرداء رضی اللہ عنہ روایت کرتے ہیں کہ نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشادفرمایا: اللہ تعالیٰ کی خاطر اپنی عبادت کوخالص کرلو،نمازِ پنجگانہ قائم کرو، اپنے مال کی زکوٰۃ خوشی سے ادا کرو ،اپنے مہینے (رمضان المبارک ) کے روزے رکھو، اپنے گھر (بیت اللہ شریف ) کا استعداد کی صورت میں )حج کرو، اپنے رب کی جنت میں داخل ہوجائو گے۔(طبرانی)
٭ حضرت ضحاک بن قیس روایت کرتے ہیں کہ حضور انورصلی اللہ علیہ وسلم نے ارشادفرمایا: اللہ تعالیٰ کے لیے اپنے اعمال کو خالص کرلو،اس لیے کہ اللہ تعالیٰ اپنے لیے خالص عمل کو ہی قبول فرماتا ہے۔ (دارقطنی)
٭ حضرت معاویہ رضی اللہ عنہ روایت کرتے ہیں حضوراکر م صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا : اعمال برتن کی طرح ہیں۔ جس کا نچلاحصہ بہتر ہو اس کا اوپر والا حصہ بھی ٹھیک ہوتا ہے ۔ اور جب پینداخراب ہوجائے تو بالائی حصہ بھی فاسد ہوجاتا ہے ۔ (ابن ماجہ)
٭حضرت ابوہریرہ رضی اللہ عنہ روایت کرتے ہیں کہ حضور اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا: بندہ جب ظاہر اور پوشیدگی میں نماز پڑھے اور اچھی طرح پڑھے (آداب واخلاص کے ساتھ ) تو اللہ ارشاد فرماتا ہے ،یہ میرا سچا بندہ ہے، (ابن ماجہ)
٭ حضرت ثوبان رضی اللہ عنہ روایت کرتے ہیں ،حضورنبی رحمت صلی اللہ علیہ وسلم ارشاد فرماتے ہیں : مخلصین کے لیے خوش خبری ہے۔وہ ہدایت کے چراغ ہیں ۔ان کی وجہ سے ہر چھا جانے والافتنہ ختم ہوجاتا ہے ۔(امام ابونعیم )٭حضرت ابوایوب انصاری رضی اللہ عنہ روایت کرتے ہیں ، حضور اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا : جس نے چالیس دن اللہ کے لیے خالص کرلیے ، اس کے دل اور زبان سے حکمت کے چشمے جاری ہوجائیںگے۔(امام ابو نعیم )