ادارے آئین کے مطابق کام کررہے ہیں‘ عدالتی فیصلے تسلیم کریں گے : زرداری

اسلام آباد (آن لائن) وفاقی وزیر قانون ڈاکٹر بابر اعوان عدالت عظمیٰ میں این آر او پر عمل درآمد کےس کی سماعت ختم ہونے کے بعد سپریم کورٹ سے وفاقی کابینہ کے اراکین ہمراہ سیدھا ایوان صدر گئے اور صدر آصف علی زرداری کو عدالت عظمیٰ کی کارروائی کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دی۔ حکومتی ذرائع نے بتایاکہ صدر آصف علی زرداری نے این آر او پر عمل درآمد اور سوئس مقدمات کو دوبارہ نہ کھولنے سے متعلق حکومتی موقف بھرپور انداز میں پیش کرنے پر بابر اعوان کو مبارکباد دی اور کہاکہ یہ بات خوش آئندہے کہ تمام کارروائی خوشگوار اور پرامن ماحول میں ہوئی ہے انہوں نے اس اہم کیس کی سماعت کے موقع پر سیکورٹی کے خصوصی انتظامات کرنے پر وزیر داخلہ رحمن ملک کے اقدامات کو بھی سراہا اور کہاکہ ان عناصر کی خواہشیں دم توڑ گئی ہیں جوکہ یہ امید کررہے تھے کہ حکومت اور عدلیہ میں تصادم ہونے جارہاہے۔ صدر نے واضح کیا کہ حکومت شروع دن سے مفاہمت کی پالیسی پر عمل پیرا ہے اور ہم اس کو آگے بڑھاتے رہیںگے۔ تمام ریاستی ادارے آئین کے مطابق اپنا کردار ادا کررہے ہیں حکومت نے پہلے بھی عدلیہ کے فیصلوں کو تسلیم کیاہے اور آئندہ بھی ان کے فیصلوں کا احترام کرینگے اور انہیں تسلیم کیا جائےگا۔ ذرائع کے مطابق صدر نے اس موقع پر بابر اعوان کے ساتھ جانے والے وفاقی وزراءامین فہیم‘ قمر الزمان کائرہ‘ راجہ پرویز اشرف‘ سردار آصف ایم زری و دیگر کو بھی مبارکباددی کہ خوش اسلوبی کے ساتھ تمام معاملات مکمل ہوئے ہیں اور حکومت نے اپنا نکتہ نظر آئین اور قانون کے مطابق عدلیہ کے سامنے رکھا ہے۔