جماعت اسلامی بنگلہ دیش کے سابق امیر غلام اعظم کی نماز جنازہ آج ڈھاکہ میں ہو گی

جماعت اسلامی بنگلہ دیش کے سابق امیر غلام اعظم کی نماز جنازہ آج ڈھاکہ میں ہو گی

لاہور+ اسلام آباد+ جہلم (خصوصی نامہ نگار+ نامہ نگار+ ثناء نیوز) جماعت اسلامی بنگلہ دیش کے سابق امیر پروفیسر غلام اعظم کی گزشتہ روز لاہور، اسلام آباد اور جہلم میں غائبانہ نماز جنازہ ادا کی گئی جس میں جماعت اسلامی کے رہنمائوں، کارکنوں اور شہریوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی جبکہ پروفیسر غلام اعظم کی نماز جنازہ آج ڈھاکہ کی بیت المکرم مسجد میں نماز ظہر کے بعد ادا کی جائیگی۔ لاہور میں منصورہ میں غائبانہ نماز جنازہ حافظ محمد ادریس نے پڑھائی جس میں سینکڑوں افراد نے شرکت کی۔ اسلامک سنٹر میں غائبانہ نماز جنازہ کے موقع پر گفتگو کرتے ہوئے سراج الحق نے کہا پروفیسر غلام اعظم کے انتقال پر عالم اسلام غم کے سمندر میں ڈوب گیا ہے خاص طور پر ان کی رحلت عالمی اسلامی تحریکوں کیلئے ایک بڑا سانحہ ہے۔ اسلام آباد میں پروفیسر غلام اعظم کی غائبانہ نماز جنازہ ادا کی گئی۔ نماز جنازہ نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان میاں محمد اسلم نے پڑھائی اور ان کی مغفرت کے لئے دعا کرائی نماز جنازہ میں جماعت اسلامی اسلام آباد کے ضلعی امیر زبیر فاروق خان سمیت سیکڑو ں کارکنوں اور عوام کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ جہلم میں پروفیسر غلام اعظم کی غائبانہ نمازہ جنازہ دفتر جماعت اسلامی جہلم میںادا کی گئی، نماز جنازہ میں جماعت اسلامی کے کارکنوں کے علاوہ شہریوں نے بھی شرکت کی۔ یاد رہے کہ پروفیسر غلام اعظم بنگلہ دیش کی جیل میں 1971ء کی جنگ میں پاکستان کا ساتھ دینے کے جرم 99 برس کی عمر قید کی سزا کاٹ رہے تھے۔ این این آئی کے مطابق پروفیسر غلام اعظم مرحوم کے بیٹے بریگیڈئر (ر) عبداللہ اعظمی آج بعد نماز ظہر مسجد بیت المکرم ڈھاکہ میں پروفیسر غلام اعظم مرحوم کی نماز جنازہ پڑھائیں گے ۔