برطانیہ میں بے گناہ طلباء کی گرفتار ی پاکستانی شہریوں کےخلاف انتقامی کارروائی تھی: آصف درانی

لندن (آن لائن) پاکستان نے طلباءکی گرفتاری کے بعد برطانوی وزیراعظم گورڈن براﺅن کے بیان پر شدید احتجاج کرتے ہوئے کہا ہے کہ براﺅن کا بیان انتہا پسندوں کی مدد اور دہشت گردی کے خلاف پاکستان کی کوششوں کو تسلیم نہ کرنے کے مترادف تھا۔ برطانوی اخبار گارڈین کے ساتھ انٹرویو میں برطانیہ میں پاکستان کے ڈپٹی ہائی کمشنر آصف درانی نے کہا ہے کہ بے گناہ طلباءکی گرفتاری برطانیہ کی طرف سے پاکستانی شہریوں کے خلاف انتقامی کارروائی تھی۔ انہوں نے کہا کہ براﺅن کی طرف سے پاکستان پر کھلے عام الزامات دہشت گردی کے خلاف برطانوی جنگ میں مددگار ثابت نہیں ہونگے۔ انہوں نے کہا کہ گورڈن براﺅن کا پاکستان کی طرف انگلی اٹھانا ہمارے لئے کسی دھچکا سے کم نہیں تھا اور یہ سراسر ناجائز اور غیر ضروری تھا۔ انہوں نے کہاکہ بغیر انتظار کئے براﺅن نے پاکستان پر انگلی اٹھائی لیکن طلباءکی بے گناہی نے ثابت کر دیا کہ برطانیہ کے الزامات غلط تھے۔