متاثرین سوات کیلئے بھیجی جانیوالی امداد کا بیشتر حصہ مستحقین تک نہیں پہنچ رہا

اسلام آباد (محمد فہیم انور) مردان\\\' صوابی\\\' چارسدہ اور پشاور میں متاثرین سوات کیلئے کروڑوں روپے ملنے والی امداد کا بیشتر حصہ خواہ وہ کسی صورت میں بھی ہو\\\' حقداروں تک نہیں پہنچ رہی۔ خوف خدا سے عاری مفادپرست عناصر امدادی کیمپوں میں پہنچنے والی اجناس اور دیگر اشیائے ضروریہ کو متاثرین تک پہنچانے کی بجائے نامعلوم منزل کی طرف بھجوا رہے ہیں جو حکومت وقت کیلئے لمحہ فکریہ ہے۔ حکمرانوں کو چاہئے کہ وہ ائرکنڈیشنڈ کمروں سے باہر نکلیں اور متاثرین کو ملنے والی امداد کی تقسیم کی نگرانی کریں۔ ان خیالات کا اظہار انجمن حمایت اسلام لاہور کے میڈیا ترجمان محمد سعید قادر نے مردان\\\' صوابی\\\' چارسدہ اور پشاور میں متاثرین سوات کے تین روزہ دورے کے بعد اسلام آباد میں نوائے وقت سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ محمد سعید قادر نے ادارہ نوائے وقت کی اپیل پر انجمن حمایت اسلام کی طرف سے دس لاکھ روپے مالیت سے زائد مالیت کے فوم کے گدے شیخ یاسین کیمپ اور شہزاد ٹاﺅن کیمپ کے علاوہ مردان کے مختلف سکولوں اور حجروں میں قائم متاثرہ خاندانوں کے پاس جاکر فرداً فرداً تقسیم کئے۔