پی ٹی آئی کی نظر ثانی کی اپیل مسترد بوگس ووٹ نکال کربھی 15 ہزارکی برتری رہے گی : سپریم کورٹ

پی ٹی آئی کی نظر ثانی کی اپیل مسترد بوگس ووٹ نکال کربھی 15 ہزارکی برتری رہے گی : سپریم کورٹ

اسلام آباد( نمائندہ نوائے وقت +آئی این پی) سپریم کورٹ نے این اے 110 سے وزیر دفاع خواجہ آصف کی کامیابی برقرار رکھتے ہوئے پی ٹی آئی امیدوار عثمان ڈارکی نظرثانی اپیل مسترد کر دی۔ عدالت نے قرار دیا کہ فیصلے پر نظرثانی کیلئے ٹھوس مواد پیش نہیں کیا گیا۔ چیف جسٹس ثاقب نثار نے کہا کہ بوگس ووٹ نکال کر بھی خواجہ آصف کوپندرہ ہزار ووٹوں کی برتری حاصل رہے گی، انتخابی ریکارڈ کومال خانے میں پھینک دیاجاتا ہے، دس لوگوں کے کہنے پرالیکشن کیسے کالعدم قراردے سکتے ہیں، بار بار موقع دینے کے باوجود عثمان ڈارجرح کے لئے پیش نہیں ہوئے۔ عثمان ڈار کی نظرثانی درخواست کی چیف جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں 3 رکنی بنچ نے سماعت کی۔ چیف جسٹس نے کہا باربارموقع دینے کے باوجود عثمان ڈارجرح کے لئے پیش نہیں ہوئے۔ جوگواہ پیش کئے گئے وہ انتخابی امیدوار کے ووٹر اور سپورٹر ہو سکتے ہیں ، دس لوگوں کے کہنے پر الیکشن کیسے کالعدم قرار دے سکتے ہیں۔ عثمان ڈارکے وکیل نے کہا کہ حلقے کے تین پولنگ سٹیشنز کا ریکارڈ تاحال نہیں ملا۔ 19 ہزار سے زائد ووٹ غیر سیل شدہ تھیلوں میں ملے۔ چیف جسٹس نے کہاکہ غیرسیل شدہ تھیلوں کوگنتی سے کیسے نکال سکتے ہیں؟ سیل توڑنے میں ملوث افراد کا تعین کر سکتے ہیں؟ سیل ٹوٹنے کا فائدہ کس کو ہوا؟