ترجمان دفترخارجہ نےکہا ہےکہ گوادربندرگاہ کو چین کے حوالے کرنے پرکسی تیسرے ملک کو اعتراض نہیں ہونا چاہئیے، افغانستان نے مولوی فقیر کی حوالگی کی یقین دہانی کرادی ہے۔

خبریں ماخذ  |  سٹی رپورٹر
ترجمان دفترخارجہ نےکہا ہےکہ گوادربندرگاہ کو چین کے حوالے کرنے پرکسی تیسرے ملک کو اعتراض نہیں ہونا چاہئیے، افغانستان نے مولوی فقیر کی حوالگی کی یقین دہانی کرادی ہے۔

اسلام آباد میں ہفتہ وار میڈیا بریفنگ کے دوران ترجمان دفتر خارجہ معظم خان کا کہنا تھا کہ گوادر منصوبے پر تعاون پر کسی تیسرے ملک کو اعتراض نہیں ہونا چاہئیے۔افغانستان، بھارت، امریکہ کے سہہ فریقی مذاکرات کے حوالے سے ایک سوال پر ترجمان کا کہنا تھا کہ افغانستان میں امن کے حوالے سے کسی بھی کوشش کا خیر مقدم کرتے ہیں۔توقع ہے کہ افغانستان کی سرزمین پاکستان کے خلاف استعمال نہیں ہوگی۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کے مطالبے پر افغان حکام نے ملافقیر کو گرفتار کرلیا ہے، حنا ربانی کھر اور افغان وزیر خارجہ زلمے رسول کی گزشتہ رات فون پر اس حوالے سے گفتگو ہوئی، امید ہے افغان حکومت ملافقیر کو جلد پاکستان کے حوالے کردے گی۔ انہوں نے کہا کہ متحدہ عرب عمارات سے توقیر صادق کی ملک بدری کی درخواست کر رکھی ہے۔ انہوں نے کہا کہ بھارتی وزیر داخلہ کا افغانستان کے ساتھ مشترکہ سرحد کا بیان مضحکہ خیز ہے۔پاک ایران گیس پائپ لائن کے حوالے سے معظم خان کا کہنا تھا کہ پاکستان امریکی تحفظات سے آگاہ ہے لیکن پاکستان توانائی کے بحران کا شکار ہے اور پاک ایران گیس پائپ لائن قومی مفاد کے مطابق ہے۔