پاکستان کا ورلڈکپ میں سفر تمام، کینگروز نے سیمی فائنل کے لیے کوالیفائی کر لیا

پاکستان کا ورلڈکپ میں سفر تمام،  کینگروز نے  سیمی فائنل کے لیے کوالیفائی کر لیا

ناک آؤٹ میچ میں پاکستانی بیٹنگ ایک مرتبہ پھر ڈبہ ثابت ہوئی،یوں لگ رہا تھا جیسے انٹرنیشنل ٹیم نہیں بلکہ کلب ٹیم بلے بازی کررہی ہے،ایڈیلیڈ کی بیٹنگ وکٹ پر  کپتان مصباح الحق نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کرنے کا فیصلہ کیا،پاکستان کا آغاز نہایت مایوس کن رہا،،چوبیس کے مجموعی اسکور پر دونوں سلامی بلے باز پویلین لوٹ گئے،سرفراز احمد دس اور احمد شہزاد پانچ رنز بنا کر آؤٹ ہوئے،مصباح الحق  نے  چونتیس رنز بنائے  ،حارث سہیل اکتالیس  کے اسکور پر میدان بدر ہوئے،اس کےبعد  شاہین بلے باز  وقفے وقفے سے اپنی وکٹیں گنواتے رہے،صہیب مقصود انتیس،،عمر اکمل بیس اور شاہد تیئس رنز بنا کر آؤٹ ہوئے،پوری ٹیم انچاس اعشاریہ پانچ اوورز میں دو سو تیرہ رنز پر ڈھیر ہوگئی ،جوش ہیزل وڈ  نے پینتیس رنز کے عوض چار شکار کیے،بیٹسمینوں کی شرمناک پرفارمنس کے بعد   میچ کی ساری ذمہ داری بالرز پر آن پڑی،پیس بیٹری نے خوب جان ماری اور انسٹھ کے اسکور پر تین کینگروز کو پویلین پہنچا دیا،ایرون فنچ دو،،وارنر چوبیس اور مائکل کلارک آٹھ پر آؤٹ ہوئے،سٹیو سمتھ کا ساتھ دینے شین واٹس میدان میں آئے ،،واٹسن پانچ پر کھیل رہے تھے کہ راحت علی نے وہاب ریاض کی گیند پر ان کا آسان کیچ ڈراپ کردیا،اس کے بعد میچ یکطرفہ ہوگیا،دونوں بلے بازوں نے بالرز کو سنبھلنے کا موقع نہ دیا اور نواسی رنز کی پارٹرن شپ قائم کرکے آسٹریلیا کی جیت کا راستہ آسان کردیا،سٹیو سمتھ پینسٹھ رنز پر آؤٹ ہوگئے،  شین واٹسن چونسٹھ رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے جبکہ گلین میکسول نے دھوں دھار چوالی رنز بنا کر  ٹیم کی  ناؤ پار لگا دی وہاب ریاض نے دو جبکہ سہیل کان اور اھسان عادل نے ایک ایک وکٹ حاصل کی ،بہترین بالنگ کرنے پر جوش ہیزل وڈ کو مین آف دی میچ ایوارڈ  سے نوازا گیا