ورلڈ کپ: پاکستان‘ آسٹریلیا آج کوارٹر فائنل میں مدمقابل ہونگے

ورلڈ کپ: پاکستان‘ آسٹریلیا آج کوارٹر فائنل میں مدمقابل ہونگے

ایڈیلیڈ (چودھری اشرف/ سپورٹس رپورٹر+ بی بی سی+ آئی این پی) عالمی کپ 2015ء کا تیسرا کوارٹر فائنل آج پاکستان اور میزبان آسٹریلیا کی ٹیموں کے درمیان ایڈیلیڈ اوول سٹیڈیم میں کھیلا جائیگا۔ پاکستان کے معیاری وقت کے مطابق میچ صبح ساڑھے 8 بجے شروع ہوگا۔ پاکستان ٹیم کی قیادت کے فرائض مصباح الحق جبکہ آسٹریلیا کی جانب سے مائیکل کلارک یہ فریضہ انجام دینگے۔ گذشتہ روز دونوں ٹیموں کے کھلاڑیوں نے پریکٹس سیشن میں حصہ لیا۔ پاکستان ٹیم کے کھلاڑیوں نے کوچنگ سٹاف کی زیرنگرانی  فیلڈنگ کے شعبہ پر زیادہ توجہ دی۔ بائولنگ کوچ مشتاق احمد اور بیٹنگ کوچ گرانٹ لڈن کھلاڑیوں کے ساتھ خوشگوار موڈ میں دکھائی دیئے۔ پاکستان اور آسٹریلیا کی ٹیموں کے درمیان ورلڈ کپ تاریخ کا 9 واں ٹاکرا ہے اس سے قبل کھیلے جانے والے 8 ورلڈ کپ کے میچز میں دونوں ٹیموں نے چار چار میچ جیت رکھے ہیں۔ پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان مصباح الحق کا کہنا ہے کہ آسٹریلیا کی ٹیم ہوم گرائونڈ اور کرائوڈ کی وجہ سے فیورٹ ہے اگر اسے شکست دینے میں کامیاب ہو گئے تو یہ اپ سیٹ ہوگا کیونکہ پاکستان ٹیم فیورٹ نہیں۔ آسٹریلیا کے خلاف حتمی سکواڈ کا فیصلہ میچ سے قبل وکٹ دیکھنے کے بعد کیا جائے گا۔ ہمیں جیت کے لیے اچھی سے اچھی کرکٹ کھیلنا ہوگی۔ فاسٹ بائولر محمد عرفان کے ان فٹ ہونے کا افسوس ہے۔ تمام کھلاڑیوں کو اس بات سے آگاہ کر دیا گیا ہے کہ پریشر لیے بغیر اچھی کارکردگی دکھانا ہوگی۔ یونس خان کو باہر کرنے کا فیصلہ بہت مشکل ہوتا ہے کیونکہ وہ ایک سینئر کھلاڑی ہے۔ ایڈیلیڈ کی وکٹ نے ابھی تک سپنرز کو مدد نہیں دی۔ آسٹریلوی ٹیم میں جارحانہ انداز اپنانے والے کھلاڑی موجود ہیں تو ہمارے سکواڈ میں بھی اچھے کھلاڑی ہیں۔ قومی ٹیم کے کپتان مصباح الحق کا کہنا تھا کہ ٹیم کے سینئر کھلاڑی پرفارم کر رہے ہوں تو جونیئر کھلاڑیوں پر کوئی پریشر نہیں ہوتا، آسٹریلیا یقیناً فیورٹ ہے لیکن ایسا بھی نہیں ہے کہ ہمیشہ فیورٹ ہی جیتیں۔ اگر آسٹریلیا کو ہرا دیا تو بڑی کامیابی ہو گی۔ آسٹریلیا کے خلاف امارات میں ٹیسٹ سیریز جیتنے کا تھوڑا بہت ایڈوانٹیج ضرور ہوگا، ہمارا بولنگ اٹیک آسٹریلوی بلے بازوں پر اپنا تاثر قائم کریگا۔ میں خود پر کوئی دبائو محسوس نہیں کرتا۔ دوسری جانب آسٹریلوی ٹیم کے کپتان مائیکل کلارک کا کہنا تھا کہ میں نہیں سمجھتا کہ ہم میچ میں فیورٹ ہیں۔ دونوں ٹیموں میں اچھے فاسٹ بائولرز کے ساتھ اچھے بلے باز موجود ہیں، پاکستان کے پیس اٹیک نے جس طرح کی بائولنگ کی ہے اسے کھیلنا آسان نہیں ہے۔ ہمیں اس کے خلاف پوری طاقت کے ساتھ میدان میں اترنا ہو گا۔پاکستان کیخلاف کوارٹر فائنل کو فائنل سمجھ کر کھیلیں گے۔ بی بی سی کے مطابق عالمی کپ میں پاکستان اور آسٹریلیا کے درمیان ہونے والے میچ ہمیشہ دلچسپ اور سخت رہے ہیں۔ دونوں ٹیمیں اب تک ورلڈ کپ میں آٹھ بار مدمقابل آئی ہیں اور مقابلہ برابری کا رہا ہے یعنی دونوں نے چار چار میچ جیتے ہیں۔ ٹورنامنٹ میں ناقابل شکست بھارتی ٹیم نے دوسرے کوارٹر فائنل میں بنگال ٹائیگرز کو چاروں شانے چت کر دیا‘ اور 109 رنز سے فتح حاصل کر کے سیمی فائنل میں جگہ بنا لی۔ بھارت نے روہت شرما کے 137 اور سریش رائنا کے 65 رنز کی بدولت بنگلہ دیش کو جیت کیلئے 303 رنز کا ہدف دیا‘ بنگلہ دیش کی طرف سے تسکین احمدکی  3 وکٹیں‘ جواب میں پوری بنگلہ دیشی ٹیم 193 رنز پر پویلین لوٹ گئی‘ ناصر حسین 35‘ صابر رحمن 30 رنز بنا کر نمایاں رہے‘ امیش یادیو نے 4‘ جدیجہ اور شامی نے 2,2 وکٹیں حاصل کیں‘ شاندار سنچری  بنانے پر روہت شرما مین آف دی میچ قرار دیا گیا۔ چوتھا کوارٹر فائنل کل ہفتہ کو نیوزی لینڈ اور ویسٹ انڈیزکے درمیان ویسٹ پیک سٹیڈیم ویلنگٹن میں کھیلا جائے گا۔ یہ میچ پاکستانی وقت کے مطابق صبح 6 بجے شروع ہو گا۔ میگا ایونٹ کا پہلا سیمی فائنل میچ 24 مارچ کو ایڈن پارک آکلینڈ جبکہ دوسرا سیمی فائنل میچ 26 مارچ کو سڈنی کرکٹ گرائونڈ پر کھیلا جائے گا۔ فائنل میچ 29 مارچ کو میلبورن کرکٹ گرائونڈ پر ہو گا۔