ہم کسی سے نہیں ڈرتے‘ تمام چیلنجز سے نمٹنے کی صلاحیت رکھتے ہیں : صدر زرداری

اسلام آباد + چکوال (نیوز ایجنسیاں + ریڈیو نیوز) صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ مفاہمتی پالیسی کو آگے لے کر چلیں گے‘ ہار جیت کے تعین کے بغیر عدالتی فیصلے کو تسلیم کیا‘ پیپلز پارٹی مفاہمتی پالیسی پر یقین رکھتی ہے‘ کارکن خود کو ہر چیلنج سے نمٹنے کے لئے تیار کریں‘ ہم کسی سے نہیں ڈرتے اور تمام چیلنجز سے نمٹنے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔ 2010ءمقامی حکومتوں کے انتخابات کا سال ہے‘ کارکن اپنے اختلافات بھلا کر بلدیاتی الیکشن کی تیاری کریں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پیپلز پارٹی کے کور گروپ کے اجلاس سے خطاب‘ چکوال کے کارکنوں کے 250 رکنی وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ صدر سے وزیراعظم یوسف رضا گیلانی نے بھی ایوان صدر میں ملاقات کی۔ اس موقع پر پیپلز پارٹی کے وفاقی وزرا اور سینئر رہنما بھی موجود تھے۔ ذرائع کے مطابق ملاقات میں عدلیہ کے ساتھ ختم ہونے والے بحران اور اس کے بعد کی صورتحال پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔ صدر زرداری نے کہا کہ حکومت نے عدلیہ کےساتھ معاملے کو خوش اسلوبی سے نمٹا کر آمرانہ ذہن رکھنے والی قوتوں کے عزائم کو ناکام بنا دیا، بلدیاتی انتخابات مےں قربانیاں دینے والے کارکنوں کو آگے لائیں گے، پیپلز پارٹی جمہوریت کو پٹڑی سے اترنے دے گی نہ ہی اداروں مےں تصادم ہو گا۔ پارٹی کارکنوں کےلئے ایوان صدر کے دروازے کھلے ہےں، آمریت دور کے ورثے مےں ملنے والے مسائل کی وجہ سے عوام سے کئے گئے وعدے پورے نہیں کر سکے۔ آن لائن کے مطابق صدر نے کہا کہ مقامی حکومتوں کے حوالے سے چاروں صوبوں میں اپنے اتحادیوں میں مشاورت کے بعد ہی کوئی متفقہ فیصلہ کیا جائے گا۔ مقامی حکومتوں کا نظام صوبائی معاملہ ہے اور ہماری خواہش ہے کہ چاروں صوبوں میں ایک جیسا نظام ہی متعارف کرایا جائے۔ اے این این کے مطابق صدر نے کہا کہ ریاستی اداروں کی مضبوطی کےلئے جدوجہد جاری رکھیں گے۔ ثناءنیوز کے مطابق صدر آصف علی زر داری نے کہا کہ پاکستان پیپلز پارٹی کو جب بھی اقتدار ملتا ہے اس کے خلاف سازشیں شروع ہو جاتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان پیپلز پارٹی شہید بےنظیر بھٹو کے مشن اور میثاق جمہوریت پر پوری طرح سے عمل کرے گی۔ دہشت گردوں کے خلاف لڑائی فیصلہ کن مرحلے میں داخل ہو چکی ہے دہشت گرد ملک سے بھاگنا شروع ہو گئے ہیں۔ پیپلز پارٹی نے ملک میں جمہوریت کی بحالی کے لئے تین آمروں کے ساتھ ٹکر لی ہے۔