ملک بھرمیں بجلی کی طویل لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے۔ چودہ سے اٹھارہ گھنٹے بجلی کی بندش کے باعث نظام زندگی مفلوج ہو کررہ گیا۔ جب کہ کاروباربھی ٹھپ ہوگئے ہیں۔

ملک بھرمیں بجلی کی طویل لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے۔ چودہ سے اٹھارہ گھنٹے بجلی کی بندش کے باعث نظام زندگی مفلوج ہو کررہ گیا۔ جب کہ کاروباربھی ٹھپ ہوگئے ہیں۔

پنجاب کے میدانی علاقوں میں جوں جوں گرمی کی شدت میں اضافہ ہورہا ہے۔ بجلی کی بندش نے توشہریوں کے پسینے چھڑا دئیے ہیں،،، ایک دفعہ بجلی گئی توکیا معلوم کب واپس آئے،،، لوڈ شیڈنگ کی غیرمعمولی صورت حال نے معمولات زندگی کوبری طرح متاثرکررکھا ہے۔ بجلی کی بندش کے باعث لاہورسمیت بیشرشہروں میں پانی کی بھی قلت پیدا ہونے لگی۔ شہروں میں لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ چودہ سے اٹھارہ گھنٹے تک جا پہنچا ہے۔ جبکہ دیہی علاقوں میں بیس بیس گھنٹوں تک بجلی کی بندش نے لوگوں کوعذاب میں مبتلا کررکھا ہے۔ بجلی کی عدم دستیابی سے صنعتوں کا پہیہ بھی رک گیا جس سے بےروزگاری میں بھی اضافہ ہورہا ہے۔