ججز نظر بندی کیس میں انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت نے سابق صدر پرویزمشرف کاچار مئی تک جوڈ یشل ریمانڈ دے دیا.

ججز نظر بندی کیس میں انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت نے سابق صدر پرویزمشرف کاچار مئی تک جوڈ یشل ریمانڈ دے دیا.

پرویزمشرف کو اسلام آباد کی انسداد دہشت گردی عدالت کے انچارج جج کوثرعباس زیدی کی عدالت میں پیش کیا گیا ،،،پولیس نے سابق صدر کے جوڈیشل ریمانڈ کی استدعا کی جب کہ درخواست گزار اشرف گجر ایڈووکیٹ نے موقف اختیار کیا کہ لال مسجد کاواقعہ اورمحترمہ بےنظیر کاقتل ایمرجنسی کےدوران ہوا،،،اس لیے پرویزمشرف کا جسمانی ریمانڈ دیا جائے،،،عدالت نے دلائل سننے کے بعد پرویزمشرف کا چار مئی تک جوڈیشل ریمانڈ دیتے ہوئے انہیں جیل بھجوانے کا حکم دیا ،،،پرویزمشرف کی عدالت میں پیشی کے موقع پرسکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے تھے،،،اور رینجرز حکام کی درخواست پرکمرہ عدالت کاآدھا حصہ بھی خالی کرالیا گیا تھا،،،سابق صدر کی پیشی کے موقع پروکلا نے ان کےخلاف نعرے بھی لگائے.