شہباز شریف کی پگاڑا سے ملاقات: مسلم لیگ ن‘ فنکشنل لیگ کا مل کر الیکشن لڑنے کا فیصلہ

شہباز شریف کی پگاڑا سے ملاقات: مسلم لیگ ن‘ فنکشنل لیگ کا مل کر الیکشن لڑنے کا فیصلہ

کراچی (سٹاف رپورٹر + نوائے وقت رپورٹ) سابق وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف نے کہا ہے کہ 11 مئی ملک کی تاریخ کا اہم ترین دن ہو گا۔ یہ دن ملک کی تقدیر بدل دے گا، آئندہ انتخابات میں مسلم لیگ (ن) اور اس کے اتحادی بھرپور کامیابی حاصل کریں گے اور جلد پیپلز پارٹی کے بت کو پاش پاش کر دیں گے۔ سندھ میں 10 جماعتی اتحاد کے ساتھ سیٹ ایڈجسٹمنٹ کے معاملات طے پا گئے ہیں اور امید ہے کہ سندھ کے عوام اپنے ووٹ کی حفاظت کریں گے اور مخلص قیادت کو اقتدار دلائیں گے۔ وہ سندھ کے پارلیمانی بورڈ کے اجلاس کے بعد میڈیا سے بات چیت کر رہے تھے۔ کراچی آمد پر مسلم لیگ (ن) کے رہنماﺅں اور کارکنوں کی بڑی تعداد نے شہباز شریف کا استقبال کیا۔ بعدازاں کلفٹن میں انہوں نے سندھ کے پارلیمانی بورڈ کے اجلاس کی صدارت کی جس میں سندھ کی سیاسی صورتحال، مختلف اضلاع میں قومی اور صوبائی اسمبلی کی نشستوں پر پارٹی ٹکٹوں کی تقسیم اور 10 جماعتی اتحاد کے ساتھ سیٹ ایڈجسٹمنٹ کے معاملات پر تفصیلی مشاورت کی گئی۔ میڈیا سے بات چیت میں شہباز شریف نے کہا کہ سیاسی قیادت خصوصاً انتخابی امیدواروں پر حملوں کے واقعات انتہائی افسوس ناک ہیں، ان واقعات کی ہم شدید مذمت کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ انتخابات کا انعقاد نگران حکومت اور الیکشن کمشن کی ذمہ داری ہے۔ آئندہ انتخابات ملک کی تاریخ کے اہم انتخابات ہیں اور ان انتخابات سے ملک کا مستقبل وابستہ ہے۔ 11 مئی ملک کی تاریخ میں تبدیلی لائے گا۔ عوام ووٹ کے ذریعے مخلص قیادت کو منتخب کریں گے اور اس تبدیلی سے پاکستان میں ایک نیا سورج طلوع ہو گا۔ ملک اپنے پیروں پر کھڑا ہو جائے گا۔ کشکول ٹوٹے گا اور ہم ایک باعزت قوم کی حیثیت سے پوری دنیا میں مزید بہترین مقام حاصل کریں گے۔ مسلم لیگ (ن) نے سندھ میں پارٹی ٹکٹوں کی تقسیم کے حوالے سے مشاورت کی ہے۔ پیر پگاڑا کا احترام کرتے ہیں۔ نواز شریف اور پیر پگاڑا کے درمیان محبت کا رشتہ قائم ہے اور یہ رشتہ ہمیشہ برقرار رہے گا۔ انہوں نے کہا کہ 10 جماعتی اتحاد سندھ کے عوام کے لئے امید کی کرن ہے اور سندھ کے عوام کو اپنے ووٹ کی حفاظت کرنا ہو گی اور 11 مئی کو پولنگ سٹیشنوں میں جا کر ووٹ کے ذریعے تبدیلی لانا ہو گی تاکہ ملک لوٹنے والے چوروں اور لٹیروں سے انہیں نجات مل سکے۔ انہوں نے کہا کہ 10 جماعتی اتحاد سندھ میں بھرپور کامیابی حاصل کرے گا۔ سابق صدر پرویز مشرف کے حوالے سے سوال کے جواب میں میاں شہباز شریف نے کہا کہ پتہ نہیں انہوں نے کس زعم میں آکر اپنے کاغذات جمع کرائے۔ وہ آئین شکن ہیں اور اکبر بگٹی کے قتل سمیت کئی اہم واقعات میں ملوث ہیں۔ اگر ہم اقتدار میں آئے تو پورے ملک سے لوڈ شیڈنگ کا دو سال کے دوران خاتمہ کر دیں گے اور ملک سے اندھیرا ختم کر کے چاروں طرف اجالا کر دیں گے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ انتخابات سے قبل چاروں سیاسی گورنرز کو تبدیل کیا جائے اور پنجاب کی طرح دیگر تین صوبوں میں بیوروکریسی تبدیل کی جائے۔ شہباز شریف نے فنکشنل لیگ کے سربراہ پیر پگاڑا سے ان کی رہائش گاہ پر ملاقات کی۔ ملاقات کے دوران دونوں قائدین نے انتخابات میں مشترکہ امیدوار لانے پر مشاورت کی گئی۔ مسلم لیگ (ن) اور فنکشنل لیگ نے الیکشن میں مل کر حصہ لینے کا فیصلہ کر لیا۔ شہباز شریف نے کہا ہے کہ سیٹ ایڈجسٹمنٹ پر کافی حد تک معاملات طے پا گئے ہیں۔ ملاقات کے بعد پگاڑا اور شہباز شریف نے صحافیوں سے بات چیت کی۔ شہباز شریف نے کہا کہ ہمارا اتحاد قائم رہے گا، آئندہ الیکشن اکٹھے لڑیں گے۔ پیر پگاڑا سے سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال ہوا۔ پیر پگاڑا نے کہا کہ الیکشن ملتوی نہیں ہوں گے۔ مسلم لیگ (ن) کے ساتھ کچھ باتیں رہ گئی ہیں جو طے کر لی جائیں گی۔ ابھی تک انتخابی میدان میں ہلچل نہیں دیکھی جا رہی۔ پہلے بھی کہا تھا کہ الیکشن قریب ہوں گے تو خون خرابہ ہو گا۔ انتخابات ملتوی ہونے کی بات ہوئی تو دیکھا جائے گا۔ میڈیا نے عوام کو ہوشیار کر دیا دھاندلی کرنے والا چھپ نہیں سکے گا۔