کالعدم تحریک طالبان نے دو اکتوبر کو ہونے والے ڈرون حملے میں طالبان کمانڈر اور خود کش حملوں کے ماسٹرمائنڈ قاری حسین کی ہلاکت کی تردید کردی ہے ۔

کالعدم تحریک طالبان نے دو اکتوبر کو ہونے والے ڈرون حملے میں طالبان کمانڈر اور خود کش حملوں کے ماسٹرمائنڈ قاری حسین کی ہلاکت کی تردید کردی ہے ۔

طالبان ذرائع  کے مطابق قاری حسین دو اکتوبر کو ہونے والے ڈرون حملے میں مکمل محفوظ رہے۔ان کی ہلاکت کی خبر میں صداقت نہیں ہے۔ دوسری جانب سیکیورٹی ذرائع نے بھی قاری حسین کی ہلاکت کی تردید کی ہے ذرائع کے مطابق قاری حسین میزائل حملے سے قبل ہی علاقہ چھوڑ چکا تھا۔ قاری حسین کے بارے میں اطلاعات تھیں کی کہ وہ دو اکتوبر کو امریکی جاسوس طیارے کے میزائل حملے میں ہلاک ہوچکا ہے