پاکستان‘ بھارت مذاکرات میں مسئلہ کشمیر کو اولیت دی جائیگی: صدر زرداری

راولپنڈی (سلطان سکندر) صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ حکومت پاکستان مسئلہ کشمیر پر اپنے قومی مؤقف پر قائم رہتے ہوئے کشمیری عوام کی حق پر مبنی جدوجہد کی سیاسی سفارتی اور اخلاقی حمایت جاری رکھے گی۔ مسئلہ کشمیر کو ہر بین الاقوامی فورم پر اٹھایا جائے گا پاکستان اور بھارت کے درمیان مذاکرات میں مسئلہ کشمیر کو اولیت دی جائے گی، آزادکشمیر میں جمہوریت کا استحکام، تعمیر وترقی اور عوام کی اقتصادی خوشحالی کے لئے وفاقی حکومت آزادکشمیر کی منتخب حکومت کے ساتھ بھرپور تعاون جاری رکھے گی، پاکستانی اورکشمیری تارکین وطن کے مسائل حل کرنے میں کوئی دقیقہ فروگذاشت نہیں کیا جائے گا۔ صدر نے ان خیالات کا اظہار پاکستان پیپلز پارٹی آزادکشمیر کے صدر چودھری عبدالمجید اور سینئر نائب صدر چودھری محمد یاسین سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ جنہوں نے صدر مملکت اور پی پی پی کے شریک چیئرمین سے دو گھنٹے ملاقات کر کے آزادکشمیر کی سیاسی صورت حال اور اوورسیز کشمیریوں میں پارٹی کی تنظیم اور تارکین وطن کے مسائل کے حوالے سے تفصیلی تبادلہ خیال کیا۔ دریں اثناء صدر آصف علی زرداری 18 جولائی کو پیپلز پارٹی کے اراکین قومی اسمبلی اور صوبائی اسمبلی کے اعزاز میں ایوان صدر میں عشائیہ دیں گے۔دریں اثناء صدر آصف علی زرداری نے سمندر پار مقیم اعلیٰ تعلیم یافتہ پاکستانیوں کی خدمات سے اندرون ملک استفادہ کرنے اور بیرون ملک انہیں روزگار کے مواقع حاصل کرنے میں مدد دینے کیلئے ایک شفاف اور قابل اعتماد میکنزم قائم کرنے کی ضرورت پر زور دیا ہے۔ وہ ایوان صدر میں روزگار کی سکڑتی ہوئی عالمی منڈی میں اعلیٰ تعلیم یافتہ پاکستانیوں کے لئے روزگار کے بارے میں منعقدہ بریفنگ سے خطاب کر رہے تھے۔