چیف جسٹس کی زیر صدارت فل کورٹ اجلاس، زیر التوا مقدمات، عدالتی امور پر غور

چیف جسٹس کی زیر صدارت فل کورٹ اجلاس، زیر التوا مقدمات، عدالتی امور پر غور

لاہور + اسلام آباد (وقائع نگار خصوصی +نمائندہ نوائے وقت) چیف جسٹس افتخار محمد چودھری کی زیر صدارت سپریم کورٹ کا فل کورٹ اجلاس ہوا جس میں زیر التوا مقدمات نمٹائے جانے اور عدالت کے انتظامی امور پر غور کیا گیا۔ فل کورٹ نے ریٹائرڈ ہو جانے والے جسٹس شاکر اللہ جان کی خدمات کو بھی سراہا۔ علاوہ ازیں لاہور ہائی کورٹ میں سپریم کورٹ کے جج مسٹر جسٹس میاں شاکر اللہ جان کے اعزاز میں افطار پارٹی کا انعقاد کیا گیا جس میں سپریم کورٹ کے ججز مسٹر جسٹس تصدق حسین جیلانی، مسٹر جسٹس آصف سعید کھوسہ، مسٹر جسٹس شیخ عظمت سعید، لاہور ہائی کورٹ کے چیف جسٹس مسٹر جسٹس عمر عطا بندیال، شریعت کورٹ کے جج شیخ احمد فاروق، لاہور ہائی کورٹ کے ججز صغیر احمد قادری، ناصر سعید شیخ، محمد خالد محمود، شیخ نجم الحسن، چودھری شاہد سعید، مظاہر علی اکبر نقوی، چودھری محمد طارق، سید کاظم رضا شمسی، شاہد حمید ڈار، مظہر اقبال سدھو، یاور علی، فرخ عرفان خان، رﺅف احمد شیخ، عبدالستار اصغر، مامون الرشید، محمود مقبول باجوہ، افتخار حسین شاہ، طارق مسعود، امین الدین، عائشہ اے ملک، محمد امیر بھٹی، جسٹس (ریٹائرڈ) اسد منیر اور جسٹس (ریٹائرڈ) جمشید علی شاہ نے شرکت کی۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے فاضل چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ جسٹس عمر عطا بندیال نے جسٹس شاکر اللہ جان کی خدمات کو سراہا۔ جسٹس شاکر اللہ جان کل اپنے عہدے سے ریٹائر ہو جائیں گے، ان کی ریٹائرمنٹ سے اعلیٰ عدلیہ میں ججز کی تعداد 16 رہ جائے گی۔