لیاری سے نقل مکانی‘ سرجیکل آپریشن کا حکم‘ بابا لاڈلہ کا برادر نسبتی کمانڈر آصف ساتھی سمیت مارا گیا

لیاری سے نقل مکانی‘ سرجیکل آپریشن کا حکم‘ بابا لاڈلہ کا برادر نسبتی کمانڈر آصف ساتھی سمیت مارا گیا

کراچی (رپورٹنگ ٹیم+ نوائے وقت رپورٹ+ این این آئی) لیاری میں فائرنگ، راکٹ حملوں میں بے گناہوں کی ہلاکتوں پر گذشتہ روز لیاری میں سوگ کے سبب سناٹا چھاپا رہا۔ تمام مارکیٹیں بند رہیں جبکہ علاقے سے لوگوں نے بڑے پیمانے پر نقل مکانی شروع کر دی۔ سینکڑوں لوگوں نے گھروں کو تالے لگا کر پریس کلب کے سامنے مظاہرہ کیا اور اپنے گھروں کی چابیاں سڑک پر پھینک دیں۔ نوائے وقت رپورٹ کے مطابق لیاری کے علاقے ایکسر لائن میں رینجرز اور پولیس کی مشترکہ کارروائی میں گینگ وار کمانڈر آصف نیازی اور عمران مارے گئے۔ ذرائع کا کہنا ہے آصف نیازی کو ہلاکت سے دو گھنٹے پہلے زخمی حالت میں گرفتار کیا گیا تھا ملزم آصف نیازی کے سر کی قیمت 5 لاکھ روپے مقرر تھی اور وہ گینگ وار کے انتہائی مطلوب ملزم بابا لاڈلہ کا برادر نسبتی تھا۔ عمران نیازی 60 سے زائد سنگین وارداتوں میں ملوث تھا۔ این این آئی کے مطابق لیاری کے سینکڑوں مکینوں کا کہنا ہے کراچی میں کسی پارک یا فٹ پاتھ پر بھی جگہ ملے گی تو اپنے بچوں اور خاندان کو محفوظ رکھنے کے لئے وہاں رہائش اختیارکرلیں گے۔ مظاہرے میں خواتین، بچوں اور اہل علاقہ کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ مظاہرین نے ہاتھوں میں پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے جن پر نعرے درج تھے حکومت کب جاگے گی، لیاری میں کب امن ہوگا، طالبان سے مذاکرات اور بلوچوں کی نسل کشی، لیاری کو دہشت گردوں سے آزاد کراؤ۔ مظاہرے میں وائس فار بلوچ مسنگ پرسنز کے رہنما ماما قدیر بلوچ، یوسف مستی خان سمیت مختلف سماجی تنظیموں اور سول سوسائٹی کے افراد نے بھی شرکت کی۔ مظاہرین کا کہنا تھا ہم حکومت سے اپیل نہیں کریں گے ہم حکومت کو ٹیکس دیتے ہیں۔ لیاری میں حالات خراب کرنے کی ذمہ دار وفاقی اور صوبائی حکومتیں ہیں، جو صورت حال پر قابو میں ناکام ہوگئی ہیں۔ ماما قدیر بلوچ نے الزام عائد کیا لیاری کے حالات خراب کرنے میں خفیہ اداروں کا بھی ہاتھ ہے۔ مزید برآں وزیر اعظم ڈاکٹر نواز شریف ایک روزہ دورہ پر (آج) جمعہ کو کراچی پہنچیں گے۔ وزیر اعظم گورنر ہاؤس میں کراچی میں امن و امان کی صورت حال خصوصاً لیاری کے مسئلے پر ایک اعلیٰ سطح کے اجلاس کی صدارت کریں گے۔ وزیر اعظم کو کراچی آپریشن کے موجودہ اہداف، آپریشنل پلاننگ،گرفتاریوں اور لیاری کی صورت حال پر بریفنگ دی جائے گی۔ وزیر اعظم کراچی آپریشن کی حکمت عملی کی تبدیلی کے حوالے سے اہم فیصلے کریں گے۔ نوائے وقت رپورٹ کے مطابق حکومت سندھ نے قانون نافذ کرنے والے اداروں کو لیاری گینگ وار ملزمان کے خلاف سخت کارروائی اور شہروں اور دیہات میں غیر قانونی مدارس بند کرنے کا حکم دیدیا۔ میڈیا کے مطابق وزیراعلیٰ سندھ کی زیر صدارت کراچی میں امن و امان کی صورتحال سے متعلق اجلاس ہوا۔ ذرائع کے مطابق وزیراعلیٰ سندھ نے قانون نافذ کرنے والے اداروں کو گینگ وار ملزمان کے خلاف سخت کارروائی اور لیاری میں سرجیکل آپریشن شروع کرنے کا حکم دیا۔ وزیراعلیٰ سندھ نے ہدایت کی لیاری میں پولیس و رینجرز کی چوکیوں میں اضافہ کیا جائے، لیاری میں امن کے لئے سخت طریقہ کار اپنایا جائے۔ این این آئی کے مطابق شہر قائد میں فائرنگ اور پرتشدد واقعات میں اے این پی کے عہدیدار سمیت 3 افراد قتل جبکہ خاتون سمیت 5 افراد زخمی ہو گئے۔ سائٹ اے تھانے کی حدود میں موٹرسائیکل سوار ملزموں نے فائرنگ کر کے اے این پی کے علاقائی عہدیدار 24 سالہ ایاز خان شامزئی اور 32 سالہ گل نواز کو زخمی کر دیا۔ بعدازاں گل نواز راستے میں دم توڑ گیا۔ کراچی میں انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت نے فرقہ وارانہ ٹارگٹ کلنگ میں ملوث مبینہ 3 ملزموں کو چودہ روزہ جسمانی ریمانڈ پر پولیس کی تحویل میں دیدیا۔ لیاری سنگولین میں رینجرز نے چھاپہ مار کر بھاری اسلحہ اور گولیاں برآمد کر لیں۔ گرفتار ملزموں کی نشاندھی پر پولیس کی وردیاں، واکی ٹاکی بھی برآمد ہوئے۔ لیاری میں گذشتہ روز بم دھماکوں اور ہلاکتوں کے چار مقدمات درج کر لئے گئے۔ مقدمات میں گینگ وار کے بالا لاڈلہ اور غفار ذکری گروہوں کو نامزد کیا گیا ہے۔ مزید براں وقائع نگار کے مطابق محکمہ داخلہ سندھ نے 11 خطرناک دہشت گردوں کی گرفتاری کے لئے ان کے سروں کی پانچ پانچ لاکھ روپے قیمت مقرر کرنے کی سفارش کر دی۔ سٹاف رپورٹر کے مطابق کراچی کے علاقے نارتھ ناظم آباد میں کٹی پہاڑی کے قریب مٹی کا تودہ گرنے سے سڑک بند ہو گئی۔ کرائٹم رپورٹر کے مطابق کراچی میں رینجرز نے ٹارگیٹڈ آپریشن اور پولیس کے چھاپوں کے دوران لیاری گینگ وار کے کارندوں اور ٹارگٹ کلنگ میں ملوث سیاسی جماعتوں کے کارکنوں سمیت 165 ملزمان کو گرفتار کر کے منشیات، شراب کی بوتلیں اور بھاری اسلحہ برآمد کر لیا۔