سندھ کے3 اور لاہور ہائیکورٹ کے 2 ایڈیشنل جج فارغ

سندھ کے3 اور لاہور ہائیکورٹ  کے 2 ایڈیشنل جج فارغ

کراچی/ اسلام آباد/ لاہور (ریڈیو مانیٹرنگ+ وقائع نگار خصوصی+ ایجنسیاں) سندھ ہائیکورٹ کے تین‘ لاہور ہائیکورٹ کے 2ایڈیشنل ججز کو فارغ جبکہ سندھ کے 2اور لاہور کے 4ججوں کو مستقل کر دیا گیا ہے۔ مدت ملازمت ختم ہونے پر فارغ کئے گئے ججوں میں سندھ ہائیکورٹ کے جسٹس فرخ ضیائ‘ شیخ قمر الدین‘ غلام دستگیر اور لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس علی حسین اور جسٹس سیف الرحمن شامل ہیں جبکہ سندھ ہائیکورٹ کے 2ججز جسٹس آغاز رفیق اور جسٹس پیر بنیامین کی مدت ملازمت میں 6ماہ‘ پشاور ہائیکورٹ کے 6ججوں کی مدت ملازمت میں ایک سال کی توسیع کر دی گئی ہے۔ ذرائع کے مطابق آج نوٹیفیکیشن جاری ہونے کا امکان ہے۔ علاوہ ازیں لاہور ہائیکورٹ کے 10نئے ججوں کی تقرری کے لئے گورنر پنجاب نے حتمی منظوری کے لئے سمری صدر کو بھجوا دی ہے۔ ذرائع کے مطابق لاہور ہائیکورٹ کے نئے ججوں کی تقرری کے لئے پاکستان بار کے ممبر رمضان چودھری‘ لاہور ہائیکورٹ بار کے صدر منظور قادر‘ پیپلز لائرز فورم پنجاب کے صدر میاں جہانگیر‘ عابد ساقی‘ شفقت عباسی‘ شہرام سرور‘ ممتاز مصطفی‘ انوار الحق‘ حبیب اللہ شاکر‘ انتخاب شاہ اور پرویز عنایت کے ناموں کی منظوری دے دی گئی ہے۔ آن لائن کے مطابق لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس خورشید انور‘ جسٹس اکرم‘ جسٹس خواجہ فاروق اور جسٹس منہاس کو مستقل کر دیا گیا ہے اور ان کی ملازمت میں توسیع‘ منتقل کئے جانے کے نوٹیفیکیشن آج جاری ہونے کا امکان ہے۔ اے این این کے مطابق اس وقت لاہور ہائیکورٹ میں 37جج صاحبان فرائض سرانجام دے رہے ہیں‘ نئی تقرریوں سے تعداد 47ہو جائے گی جبکہ ہائیکورٹ کے ججز کی کل تعداد 60ہے۔