عمران نیازی خود کو برطانوی ذہنی غلامی سے نہیں نکال پائے:عائشہ گلالئی

خبریں ماخذ  |  ویب ڈیسک
عمران نیازی خود کو برطانوی ذہنی غلامی سے نہیں نکال پائے:عائشہ گلالئی

 پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان پر الزامات لگانے والی رکن قومی اسمبلی عائشہ گلالئی نے کہا ہے کہ 20 لاکھ مسلمانوں کی قربانی سے برطانیہ کی غلامی سے نجات ملی مگر عمران نیازی خود کو برطانوی ذہنی غلامی سے نہیں نکال پائے۔ پارلیمانی کمیٹی کا خیرمقدم کر کے اب عمران نیازی برطانوی طرز کے کمیشن کا مطالبہ کر رہے ہیں۔ پاکستان کے فیصلے یہاں کے آئین کے مطابق ہوں گے۔ پاکستان کے آئین پر مجھے اور تمام پاکستانیوں کو اعتماد ہے۔ عمران نیازی بتائیں انہیں پاکستان کے آئین پر اعتماد کیوں نہیں اپنے ایک ویڈیو بیان میں عائشہ گلالئی کا کہنا تھا کہ اگرچہ ہمیں برطانوی غلامی سے نکلے ہوئے اتنی دھائیاں ہو گئی ہیں لیکن آج بھی ایک بڑی سیاسی پارٹی کے چیئرمین عمران نیازی صاحب خود کو برطانوی ذہنی غلامی سے نہیں نکال پائے ہیں۔ آج بھی وہ ہر جگہ وہاں کی مثالیں دیتے ہیں لیکن میں عمران نیازی صاحب سے کہوں گی کہ برائے مہربانی اگر آپ خود اس کمپلیکس میں مبتلا ہیں اور ذہنی غلامی کا شکار ہیں تو پاکستان کی نوجوان نسل جو انتہائی باصلاحیت ہے اور پاکستان کا مستقبل ہے اور قیمتی سرمایہ ہے۔ ان کو اس ذہنی غلامی میں مبتلا مت کریں۔ پارلیمنٹ ہمارے ملک کا ادارہ ہے۔ برطانیہ کی اپنی روایات اپنا کلچر اور اپنے قوانین ہیں۔ پاکستان کا اپنا قانون اور اپنا آئین ہے۔ یہاں پر فیصلے یہاں کے قانون کے مطابق ہونگے جس پر مجھے اعتماد ہے اور تمام پاکستانیوں کو اعتماد ہے پھر آپ کو کیوں اعتماد نہیں۔