لاہور میں کارروائی واہگہ بارڈر حملے کے ماسٹر مائنڈ نے خود کو اڑایا‘ دو ساٹھی مارے گئے

لاہور میں کارروائی واہگہ بارڈر حملے کے ماسٹر مائنڈ نے خود کو اڑایا‘ دو ساٹھی مارے گئے

لاہور (سٹاف رپورٹر) برکی روڈ پر حساس اداروں اور سی آئی اے پولیس کے ایک گھر پر چھاپے کے دوران کالعدم تنظیم کے کمانڈر، 2 ساتھی مارے گئے جبکہ واہگہ بارڈر دھماکے کے ماسٹر مائنڈ کمانڈر اسد عرف روح اللہ نے پکڑے جانے کے خوف سے خود کو دھماکے سے اڑایا۔ ہلاک ہونیوالے تینوں دہشت گردوں کا تعلق باجوڑ سے بتایا گیا ہے۔ سی آئی اے پولیس کی مدعیت میں مقدمہ درج کر لیا گیا ہے معلوم ہواہے کہ تھانہ برکی کے علاقہ میں واہگہ بارڈر بم دھماکے میں گرفتار افراد کی مخبری پر حساس اداروں اور سی آئی اے پولیس برکی منڈیاں والا روڈ پل کے قرےب واقع ایک گھر پر چھاپہ مارنے پہنچی تو گھر میں موجود کالعدم تنظیم کا اہم کمانڈر اسد عرف روح اللہ اور اس کے 2 ساتھیوں معراج خان عرف رحمان اور عمر فاروق حساس اداروں اور سی آئی پولیس پر فائرنگ شروع کر دی جوابی فائرنگ کر نے کے نتیجے میں 2 مبینہ دہشت گرد معراج عرف رحمان اور عمر فاروق ہلاک ہوگئے جبکہ کمانڈر اسد عرف روح اللہ قریب کھیتوں میں بھاگ گیا اور اسی دوران پولیس کے تعاقب پر خود کو بارودی مواد سے اڑایا۔ کمانڈر اسد عرف روح اللہ واہگہ بارڈر دھماکے کا ماسٹر مائنڈ بتایا گیا ہے سی آئی پولیس نے مبینہ دہشت گردوں کیخلاف اپنی مدعیت میں مقدمہ درج کر لیا ہے۔ نوائے وقت رپورٹ کے مطابق ذرائع کا کہنا ہے کہ روح اللہ کا تعلق ملا فضل اللہ کے گروپ سے تھا۔ دہشت گرد روح اللہ باجوڑ میں فورسز پر حملوں اور بھتہ خوری کی وارداتوں میں ملوث تھا۔
خود کو اڑایا