دفتر خارجہ کے مطابق دس روز میں ایک ہزار سے زائد محصورین وطن واپس پہنچے

دفتر خارجہ کے مطابق دس روز میں ایک ہزار سے زائد محصورین وطن واپس پہنچے

دفتر خارجہ سے جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا ہے کہ یمن کے حالات کے باعث وہاں محصور پاکستانیوں کو وطن واپس لانے کا مشن مکمل کر لیا گیا ہے۔ دس روز تک جاری رہنے والے ریسکیو اپریشن کے دوران ایک ہزار انیس ہم وطنوں کو واپس لایا گیا۔ دفتر خارجہ کے مطابق یمن سے پاکستانیوں کے انخلا کا عمل سات اپریل کو مکمل ہوا۔ محصورین کی واپسی کیلئے قومی ائیرلائن کی خصوصی پروازوں کے ساتھ ساتھ پاک بحریہ نے بھی بھرپور کردار ادا کیا۔ پاکستان نیوی کا بحری جہاز اصلت دو اپریل کو المکلا پہنچا تو حالات بگڑنے کے باعث متبادل پلان پر عملدرآمد کرتے ہوئے ایک سو چھیالیس پاکستانیوں سمیت ایک سو بیاسی محصورین کو لے کر وطن واپس روانہ ہوا جو سات اپریل کو کراچی پہنچا۔ اس سے پہلے الشمشیر کے ذریعے یمن سے چھتیس پاکستانیوں سمیت اکاون محصورین کو بحفاظت الحدیدہ سے جبوتی منتقل کیا گیا جنہیں بعد میں ہوائی سفر کے ذریعے وطن روانہ کیا گیا۔ اس کے علاوہ بارہ پاکستانیوں کو خصوصی ٹیم کے ذریعے یمن اومان بارڈر سے وطن واپس منتقل کیا گیا۔ دفتر خارجہ کے مطابق یمن میں محصور پاکستانیوں کے انخلا کا عمل تاریخی تھا جسے بخوبی انجام دیا گیا۔