ہیلی کاپٹرکی کریش لینڈنگ میں2پائلٹ شہیدفلپائن اور ناروے کےسفیروں سمیت انڈونیشیا اورملائشیا کےسفیروں کی بیگمات ہلاک

 ہیلی کاپٹرکی کریش لینڈنگ میں2پائلٹ شہیدفلپائن اور ناروے کےسفیروں سمیت انڈونیشیا اورملائشیا کےسفیروں کی بیگمات ہلاک

پاک فوج کےشعبہ تعلقات عامہ کےمطابق گلگت میں ایم آئی سیون ٹین ہیلی کاپٹرکی کریش لینڈنگ ہوئی جس میں  میں گیارہ غیرملکی اورچھ  پاکستانی سوار تھے۔ حادثے میں سات افراد جاں بحق ہوئے جن میں تین پاکستانی اورچارغیرملکی شامل ہیں، غیرملکیوں میں ناروے اور فلپائن کےسفیروں سمیت انڈونیشیا اورملائشیا کے سفیروں کی بیگمات بھی شامل ہیں۔ حادثے میں زخمی ہونے والوں میں رومانیہ کے سفیر، جنوبی افریقا کے ہائی کمشنراور پولینڈ کے سفیر اوران کی اہلیہ بھی شامل ہیں۔ ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ ہیلی کاپٹرپرسوارباقی افراد کو مختلف نوعیت کے زخم آئے ہیں ۔ترجمان پاک فوج کے مطابق آرمی ایوی ایشن کے پائلٹ میجرالتمش اورمیجر فیصل حادثے میں شہید ہوئے جبکہ زخمیوں میں ونگ کمانڈر میجر وسیم، میجر کامران، ایوی ایشن کے حوالداراورنگزیب اورنائیک کلیم شامل ہیں۔ترجمان پاک فوج میجرجنرل عاصم باجوہ نےسماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر حادثے کی وجوہات سے متعلق بتایا کہ تین ہیلی کاپٹر سفارتکاروں اور دیگرغیرملکی اورمقامی مہمانوں کولےکرنلترجارہےتھےکہ  دو ہیلی کاپٹر لینڈ کرگئے تاہم ہیلی کاپٹر ایم آئی سیونٹین لینڈنگ کے دوران تکنیکی خرابی کے باعث گرگیا ۔دوسری جانب ترجمان وزیراعظم کا کہنا ہے کہ ہیلی کاپٹر حادثے کےبعد وزیراعظم نے دورہ نلتر منسوخ کردیا جبکہ انہیں گلگت روانگی کے دوران حادثے کی اطلاع ملی جس کےبعد ان  کا طیارہ گلگت میں اترے بغیر واپس اسلام آباد پہنچ گیا۔وزیرِ اعظم ہاؤس کےایک اہلکار کے مطابق یہ تمام افراد نلترمیں سکی انگ ریزورٹ کی افتتاحی تقریب میں شرکت کے لیے جا رہے تھے۔مجموعی طور پر تین ہیلی کاپٹروں کے ذریعے تیس ممالک کے سفارتکاروں نے افتتاحی تقریب میں شرکت کرنا تھی ۔ ان افراد میں چین ، ساوتھ افریقہ ، اسپین، ملائیشیا، انڈونیشیا، پولینڈ، ہالینڈ اور کولمبیا کے سفیراوران کی بیگمات شامل تھیں۔