ورلڈکپ میں پروٹیز کیخلاف پہلی فتح‘ سرفراز آئے اور چھا گئے‘ شاہینوں نے جنوبی افریقہ کو ڈھیر کر دیا : کوارٹر فائنل کا راستہ صاف ملک بھر میں جشن

ورلڈکپ میں پروٹیز کیخلاف پہلی فتح‘ سرفراز آئے اور چھا گئے‘ شاہینوں نے جنوبی افریقہ کو ڈھیر کر دیا : کوارٹر فائنل کا راستہ صاف ملک بھر میں جشن

آک لینڈ + لاہور (چودھری اشرف+ نمائندہ سپورٹس+ نیوز ایجنسیاں+ نمائندہ خصوصی+ نامہ نگاران) پاکستان نے ورلڈکپ پول بی کے اہم میچ میں دلچسپ مقابلے کے بعد جنوبی افریقہ کی ٹیم کو 29 رنز سے شکست دیکر تاریخ بدل ڈالی۔ یہ قومی ٹیم کی ورلڈکپ مقابلوں میں جنوبی افریقہ کیخلاف پہلی فتح ہے اور اس کامیابی کے بعد پاکستان ٹیم اپنے گروپ میں تیسرے نمبر پر آگئی ہے اور اسکا کوارٹر فائنل میں پہنچنے کا راستہ صاف ہوگیا۔ ایڈن پارک میں کھیلے گئے میچ میں جنوبی افریقہ کے کپتان اے بی ڈویلیئرز نے ٹاس جیت کر پاکستان کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی۔ سرفراز احمد اور احمد شہزاد نے اننگز کا آغاز کیا۔ 30 کے مجموعی سکور پر پاکستان کی پہلی وکٹ گرگئی جب احمد شہزاد 18 رنز بنا کر کائل ایبٹ کی گیند پر کیچ آؤٹ ہوگئے تاہم سرفراز احمد نے اپنا انتخاب درست ثابت کرتے ہوئے 49 گیندوں پر 3 چھکوں اور 5 چوکوں کی مدد سے 49 رنز کی عمدہ اننگز کھیلی۔ وہ 17 ویں اوور میں رن آؤٹ ہوئے۔ وہ پورے میچ میں چھائے رہے اور 6 شاندار کیچ بھی پکڑے۔ انکے بعد یونس خان بیٹنگ کرنے آئے اور انہوں نے بھی ذمہ داری سے 37 رنز بنا کر ٹیم میں اپنی واپسی کو درست ثابت کیا۔ وہ اے بی ڈویلیئرز کی گیند پر کیچ آؤٹ ہوئے۔ صہیب مقصود صرف 8 کے انفرادی اسکور پر کائل ایبٹ کا شکار بنے۔ عمر اکمل بھی صرف 13 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئے۔ اس موقع پر کپتان مصباح الحق نے نے ایک بار پھر ذمہ دارانہ بیٹنگ کا مظاہرہ کیا اور ورلڈکپ کی چوتھی نصف سنچری مکمل کرتے ہوئے 56 رنز کی شاندار اننگز کھیلی۔ مصباح نے شاہد آفریدی اور ٹیل اینڈر کے ساتھ ملکر رنز جوڑنے کی کوشش کی۔ شاہد آفریدی 22 رنز بناکر سٹین کی گیند پر کیچ آ?ٹ ہوئے۔ آفریدی کے آ?ٹ ہونے کے بعد پاکستانی بلے باز زیادہ دیر وکٹ پر نہ ٹھہر سکے۔ کپتان مصباح الحق بھی ڈیل سٹین کی ایک شارٹ پچ گیند پر تھرڈ مین کی طرف چھکا لگانے کی کوشش میں مورکل کے ہاتھوں کیچ آ?ٹ ہوگئے۔ پاکستان کے آخری پانچ کھلاڑی سکور میں صرف 10رنز کا اضافہ کرسکے۔ یوں قومی ٹیم 222 رنز بنا سکی اور پوری ٹیم 47 ویں اوور میں آؤٹ ہوگئی، تاہم جنوبی افریقہ کو ڈک ورتھ لوئس میتھڈ کے تحت 47 اوورز میں 232 رنز کا ہدف ملا۔ جنوبی افریقہ کی جانب سے ڈیل سٹین نے 3 کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا، کائل ایبٹ اور مورنے مورکل نے 2،2 جبکہ عمران طاہر اور اے بی ڈویلیئرز نے ایک، ایک وکٹ حاصل کی۔ جنوبی افریقہ نے232 رنز کے ہدف کے تعاقب میں بیٹنگ کا آغاز کیا تو پہلے اوور کی دوسری گیند پر ہی کوئٹن ڈی کوک محمد عرفان کی گیند پر بغیر کوئی رن بنائے وکٹوں کے پیچھے کیچ آؤٹ ہوگئے جس کے بعد ڈوپلیسی اور ہاشم آملہ نے ملکر 67 رنز کی شراکت قائم کی تاہم ڈوپلیسی کو 27 کے انفرادی اسکور پر راحت علی نے آ?ٹ کردیا۔ ہاشم آملہ جارحانہ انداز میں اپنی ٹیم کے سکور کو آگے بڑھا رہے تھے لیکن ڈوپلیسی کے آ?ٹ ہونے کے فوری بعد وہاب ریاض کی گیند پر وکٹ کیپر سرفراز احمد نے انکا ایک ناقابل یقین کیچ پکڑ کر پاکستان کو تیسری کامیابی دلادی۔ انہوں نے 38 رنز بنا ئے۔ انکے بعد اے بی ڈی ویلئیرز نے ایک اینڈ سنبھال لیا اور اپنی ٹیم کو لیکر آگے بڑھنے کی کوشش کی تاہم پاکستانی بولرز نے شاندار بولنگ کرتے ہوئے پروٹیز کے یکے بعد دیگر بلے بازوں کو آ?ٹ کرنے کا سلسلہ جاری رکھا تاہم جنوبی افریقی کپتان اے بی ڈیویلئرز نے جارحانہ بیٹنگ کرتے ہوئے پروٹیز کی فتح کی امید جگائے رکھی۔ ریلے روسوو 6، ڈیوڈ ملر 8، جے پی ڈومینی 12، سٹین 16 اور کائل ایبٹ 12 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔200 کے مجموعی سکور پر جنوبی افریقہ کے کپتان اے بی ڈی ویلئیر سہیل خان کی گیند پر وکٹوں کے پیچھے کیچ آؤٹ ہوگئے۔ انہوں نے 77 رنز کی شاندار اننگز کھیلی۔ جنوبی افریقہ کے آخری آ?ٹ ہونے والے بلے باز عمران طاہر تھے جو بغیر کوئی رن بنائے وہاب ریاض کی گیند پر سرفراز احمد کے ہاتھوں کیچ آ?ٹ ہوئے۔ پاکستان کی جانب سے محمد عرفان، راحت علی اور وہاب ریاض نے شاندار بولنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے 3،3 جب کہ سہیل خان نے ایک کھلاڑی (ڈی ویلئیرز) کو آؤٹ کیا۔ بہترین کارکردگی پر سرفراز احمد کو مین آف دی میچ قرار دیا گیا۔ یوں ورلڈکپ میں تاریخی کامیابی کے بعد پاکستان کے کوارٹر فائنل میں پہنچنے کے امکانات روشن ہوگئے ہیں۔ دوسری طرف پاکستان کے وکٹ کیپر سرفراز نے ایک میچ میں 6کیچ پکڑ کر آسٹریلیا کے سابق وکٹ کیپر ایڈم گلکرسٹ کا ریکارڈ بھی برابر کر دیا۔ اب پاکستان کا آخری میچ میں آئرلینڈ سے مقابلہ باقی ہے۔ آئرلینڈ نے بھارت کے خلاف بھی میچ کھیلنا ہے جبکہ ویسٹ انڈیز کا ایک میچ متحدہ عرب امارات کیخلاف باقی ہے۔ پاکستان آئرلینڈ کے خلاف آخری میچ 15مارچ کو ایڈیلیڈ میں کھیلے گا۔ کوارٹر فائنل مرحلہ کیلئے پاکستان، ویسٹ انڈیز اور آئرلینڈ کے درمیان دوڑ جاری ہے۔ بھارت کوارٹر فائنل کیلئے کوالیفائی کرچکا ہے۔ جنوبی افریقہ 6 پوائنٹس اور رن ریٹ کی بدولت دوسرے نمبر پر ہے۔ پروٹیز آخری میچ متحدہ عرب امارات کے خلاف 12مارچ کو کھیلیں گے اور اس میچ میں جیت کی صورت میں کوارٹر فائنل میں پہنچ جائے گی۔ دوسری طرف اگر آئرلینڈ بھارت سے جیت جاتا ہے تو پھر پاکستان سے اس کے پوائنٹ زیادہ ہو جائیں گے اور پاکستان کو آخری میچ آئرلینڈ سے بھاری مارجن سے جیتنا پڑے گا۔ جنوبی افریقہ کی پوری ٹیم 33.3 اوورز میں 202 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی۔ قومی کرکٹ ٹیم کی جیت پر ملک کے مختلف شہروں میں جشن منایا گیا۔ ڈھول کی تھاپ پر بھنگڑے ڈالے گئے اور مٹھائیاں تقسیم کی گئیں۔ مختلف شہروں میں ہوائی فائرنگ بھی کی گئی۔ صدر مملکت ممنون حسین اور وزیراعظم نواز شریف نے قومی کرکٹ ٹیم کو جیت پر دلی مبارکباد دی ہے۔ وزیراعظم نے کہا کہ امید ہے قومی ٹیم ورلڈ کپ جیتنے کی خوشی بھی دے گی۔ وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف اور وزیراعلیٰ بلوچستان ڈاکٹر عبدالمالک، قائم مقام گورنر پنجاب نے مبارکباد دی اور کہا کہ میچ میں تمام کھلاڑی یک جان ہو کر کھیلے۔ امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے قومی کرکٹ ٹیم اور قوم کو مبارکباد دی۔ انہوں نے کہا کہ ٹیم اس طرح قوم کو مزید خوشیاں بھی دے گی۔ الطاف حسین نے مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ کپتان کھلاڑی اور منیجر سب سراہے جانے کے قابل ہیں۔ عمران خان اور آصف زرداری نے بھی ٹیم کو مبارکباد دی۔ عمران خان نے کہا کہ سخت ٹیم کے خلاف فتح کی ضرورت تھی۔ دعا ہے 1992ئ￿ کی طرح مصباح کی ٹیم آگے بڑھے اور ورلڈ کپ جیتے۔ خورشید شاہ اور دیگر سیاسی رہنما?ں نے پاکستان ٹیم کی جیت پر مبارکباد دی۔ چیئرمین پی سی بی شہریار خان نے قومی کرکٹ ٹیم کو مبارکباد دی۔ شہریار خان نے کہا کہ شاندار کھیل ٹیم کی یکجہتی کا نتیجہ ہے۔ وکٹ کیپر سرفراز احمد نے اپنی شاندار پرفارمنس پر اللہ کا شکر ادا کرتے ہوئے کہا ہے کہ میچ میں دنیا کی بہترین با?لنگ کا سامنا کیا، اب محسوس ہو رہا تھا کہ میرا پہلا میچ ہے۔ اس پر انہوں نے کہا کہ میچ میں شاندار پرفارمنس پر اللہ کا شکرگزار ہوں۔ سب والدین کی دعا?ں کا نتیجہ ہے۔ مصباح الحق نے کہا جنوبی افریقہ کے خلاف کامیابی سے کھلاڑیوں کا مورال بلند ہوا ‘ سرفراز نے شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا‘ جنوبی افریقہ کی ٹیم نے بہت اچھی اننگز کھیلی۔ اللہ کا شکر ادا کرتا ہوں۔ انہوں نے کہا کہ میں نے کھلاڑیوں کو اچھی لائن لینتھ پر با?لنگ کرنے کو کہا تھا جس پر کامیابی ملی۔ ہماری نظر اب آئرلینڈ نے خلاف میچ پر ہے۔ جنوبی افریقہ کرکٹ ٹیم کے کپتان اے بی ڈویلیئرز نے کہا ہے کہ پاکستان کیخلاف میچ میں ایک چھوٹا سا ہدف بھی حاصل نہ کر سکنے کی کوئی وجہ نہیں تاہم اب بھی مضبوط پوزیشن پر ہیں اور ورلڈ کپ جیت سکتے ہیں۔ یہ کوئی بڑی ہار نہیں کیونکہ بیٹنگ کرنا کچھ مشکل دکھائی دے رہا تھا مگر مجھے کبھی بھی ہارنا اچھا نہیں لگتا۔ کامونکے سے نامہ نگار کے مطابق شہر کے مختلف علاقوں میں نوجوانوں کی ٹولیوں نے بھنگڑے ڈالتے ہوئے پاکستانی ٹیم سے والہانہ جذبات کا اظہار کیا۔ سمندری سے نامہ نگار کے مطابق شہریوں اور کرکٹ کے شائقین خوشی سے جھوم اٹھے۔ عارف والا سے نامہ نگار کے مطابق قومی ٹیم کے جیتنے پر منچلوں کی گلی محلوں میں ڈھول کی تھاپ پر بھنگڑا۔ بعض علاقوں میں ہوائی فائرنگ بھی کی گئی۔ بھلوال سے نامہ نگار کے مطابق جیت کی خوشی میں بھلوال میں بھی تاجروں اور سماجی و سیاسی تنظیموں کے نمائندوں نے مٹھائی تقسیم کی۔ چشتیاں سے نامہ نگار کے مطابق میچ کے دوران چشتیاں کے بازاروں اور گلی محلوں کی سڑکیں سنسان ہو گئیں اور ڈی ویلیئرز کے آ?ٹ ہونے تک ہزاروں لوگوں کے دل ڈانوا ڈول تھے اور وہ پاکستانی ٹیم کی کامیابی کیلئے خدا سے دعائیں مانگتے رہے۔ میچ جیتنے پر کرکٹ لورز نے پٹاخے چلائے۔ گڑھ مہاراجہ سے نامہ نگارکے مطابق جیتنے کی خوشی میں گڑھ موڑ چوک میں جشن منایا گیا۔ کمالیہ میں بھی جشن منایا گیا۔ ادھر ورلڈ کپ گروپ بی کے دوسرے میچ میں آئرلینڈ نے سنسنی خیز مقابلے کے بعد زمبابوے کو 5رنز سے شکست دے دی۔ اس جیت کے بعد آئرش ٹیم گروپ ’بی‘ میں چوتھی پوزیشن پر آ گئی ہے۔ آئرلینڈ کے بلے بازوں نے مقررہ 50اوورز میں 6وکٹوں کے نقصان پر 331رنز بنائے۔ 331رنز کے ہدف کے تعاقب میں زمبابوین کھلاڑیوں نے بھی آئرش بولرز کی خوب پٹائی کی لیکن 326کے مجموعے پر پوری ٹیم پویلین لوٹ گئی۔ آج بھی دو میچ کھیلے جائیں گے۔ نیوزی لینڈ کا مقابلہ افغانستان جبکہ آسٹریلیا کا سری لنکا سے ہو گا۔ فیصل آباد سے نمائندہ خصوصی کے مطابق ٹیم کی فتح پر شہری بھی جھوم اٹھے، جیت کی خوشی میں مفت چائے بھی تقسیم کی گئی۔ چیچہ وطنی سے نامہ نگار کے مطابق میچ جیتنے کی خوشی میں شائقین کرکٹ نعرے لگاتے ہوئے سڑکوں پر آگئے۔ گوجرانوالہ سے نمائندہ خصوصی کے مطابق گوجرانوالہ کے شہریوں نے جی ٹی روڈ پر ڈھول کی تھاپ پربھنگڑے ڈالتے ہوئے وکٹ کیپر سرفراز کے حق میں نعرے با زی کی۔ شہریوں کا کہنا تھا کہ وکٹ کیپر سرفراز کومیچ میں شامل کرنا اچھا فیصلہ تھا۔
کرکٹ ورلڈکپ