ایگزیکٹ سکینڈل: شعیب شیخ‘ ان کی اہلیہ سمیت 21 افراد کے خلاف مقدمہ، 17 ملزم گرفتار

ایگزیکٹ سکینڈل: شعیب شیخ‘ ان کی اہلیہ سمیت 21 افراد کے خلاف مقدمہ، 17 ملزم گرفتار

اسلام آباد (نوائے وقت رپورٹ + آن لائن) ایف آئی اے نے ایگزیکٹ کے مالک شعیب شیخ ان کی اہلیہ عائشہ شیخ‘ وقاص عتیق سمیت 21 افراد کے خلاف دھوکہ دہی، منی لانڈرنگ کی بنیاد پر مقدمہ درج کر لیا ہے۔ ایف آئی اے اسلام آباد کے ڈائریکٹر انعام غنی نے کہا ہے کہ ایف آئی اے نے ایگزیکٹ کے مالک شعیب شیخ سمیت 21 افراد کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا۔ مقدمہ میں ملوث سترہ ملزموں کو حراست میں لے لیا گیا ہے۔ ملزموں کے خلاف مقدمہ فراڈ‘ دھوکہ‘ منی لانڈرنگ کی دفعات کے تحت درج کیا گیا مقدمہ ان کے خلاف مقدمہ ایگزیکٹ آفس سے دستیاب دستاویزات کی بنیاد پر درج کیا گیا ہے۔ ایف آئی اے کے مطابق دھوکہ میں جعلی اسناد کی خرید و فروخت‘ عالمی اداروں سے جعلی الحاق سمیت دیگر الزامات کے تحت مقدمات درج کئے ہیں۔ ایگزیکٹ کے ڈائریکٹروں، مینجروں کیخلاف بھی مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ نجی ٹی وی کے مطابق ایگزیکٹ جعلی ڈگری سکینڈل کی تحقیقات میں اہم پیشرفت ہوئی ہے۔ ایف آئی اے کو امریکی ایف بی آئی کا ابتدائی جواب موصول ہو گیا ہے۔ ایف بی آئی نے ابتدائی تحقیقات میں ایگزیکٹ کی 9 یونیورسٹیوں کو جعلی قرار دے دیا ہے۔ ایف بی آئی ایگزیکٹ کے اکاﺅنٹس اور ویب سائٹس کی معلومات بھی فراہم کرے گی۔ ایف بی آئی نے جواب میں کہا ہے کہ ایگزیکٹ کی 9 یونیورسٹیوں کا کوئی وجود ہی نہیں جعلی یونیورسٹیوں میں مسٹ، میڈیسن ہل، پیرا ماﺅنٹ، کیلی فورنیا، نکلف، بروکس فیلڈ، گرینڈ چیسٹر یونیورسٹی، ایڈفیرول، گرینڈٹام، روش ول شامل ہیں۔
ایگزیکٹ