بدین: پولیس کا مرزا فارم ہائوس کا گھیرائو: خاوند کی سکیورٹی پر تشویش ہے، فہمیدہ مرزا

بدین: پولیس کا مرزا فارم ہائوس کا گھیرائو: خاوند کی سکیورٹی پر تشویش ہے، فہمیدہ مرزا

بدین + کراچی (نامہ نگارخصوصی + نوائے وقت رپورٹ + ایجنسیاں) بدین میں موجود مرزا ہاؤس کے اطراف میں حالات کشیدہ ہوگئے۔ پولیس نے گھیرائو کرکے ذوالفقار مرزا کے فارم ہاؤس کی طرف جانے والے راستوں کو بکتر بند گاڑیوں کی مدد سے بند کرکے مرزا فارم ہاؤس کے تمام دروزاوں پر قبضہ کرلیا ہے اور مزید نفری کو طلب کیا گیا ہے۔ جبکہ ذوالفقار مرزا نے کہا ہے کہ پولیس نے عدالت تک پہنچنے سے روکنے کے لیے ناکہ بندی کی ہوئی ہے۔ پولیس مجھے بھی مرتضیٰ بھٹو کی طرح سڑک پر مارنا چاہتی ہے۔ میں عدالت سے ضمانت پر ہوں اور عدالت تک رسائی میرا حق ہے۔ منگل کی صبح سے ہی بدین کے تین تھانوں کی پولیس اور 15بکتر بند گاڑیوں اور 20سے زائد پولیس موبائلوں کے ذریعہ مرزا فارم ہاؤس کی طرف جانے والے راستے سیل کردیئے گئے۔ دوسری جانب پولیس کے اس عمل پر ڈاکٹر ذوالفقار مرزا فارم ہاؤس کے گیٹ پر کرسی رکھ کر بیٹھ گئے ان کے ہاتھ میں رائفل بھی موجود ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ وہ مقابلے کے لیے تیار ہیں۔ ذرائع کے مطابق ذرائع نے تصدیق کی ہے کہ کراچی رزاق آباد سے سپیشل پولیس فورس کی 12سے 15گاڑیاں مرزا فارم بدین میں آپریشن کے لیے روانہ کی گئی ہیں۔ ادھر بدین پریس کلب میں بذریعہ ٹیلی فون بات چیت کرتے ہوئے ذوالفقار مرزا نے کہا کہ مرزا فارم ہاؤس پر 300سے زائد آصف علی زرداری اور بدین میں موجود ان کے کمانداروں نے حملہ کردیا ہے۔ فائرنگ کا تبادلہ ہورہا ہے اور مجھے قتل کردیا جائے گا۔ کراچی سے بدین آنے والے راستے کو سیل کردیا گیا ہے۔ اگر مجھے کچھ ہوا تو اس کے ذمہ دار آصف علی زرداری اور بدین میں موجود ان کے کمدار ہوں گے۔ انہوں نے کہا کہ میں سڑکوں پر بھاگنے کی بجائے مرنے کو ترجیح دوں گا۔ میری 6مئی تک سندھ ہائی کورٹ سے عبوری ضمانت منظور کی گئی ہے لیکن اس کے باوجود ضمانت کی تاریخ ختم ہونے سے قبل مجھے گرفتار کیا گیا تو یہ عمل توہین عدالت کے زمرے میں آئے گا۔ بدین میں پولیس نے ذوالفقار مرزا کے دو ساتھیوں کو گرفتار کرکے نامعلوم مقام پر منتقل کردیا۔ ڈاکٹر ذوالفقار علی مرزا کے فارم ہائوس پر پولیس کے چھاپے اور گھیرائو کی اطلاع ملنے پر پنگریو میں مرزا گروپ کے کارکن مشتعل ہوکر سڑکوں پر آگئے اور انہوں نے شدید فائرنگ کرکے پنگریو شہر مکمل طور پر بند کرادیا۔ شہر میں شدید فائرنگ کے باعث زبردست خوف و ہراس پھیل گیا۔ علاوہ ازیں ذوالفقار مرزا نے مزید کہا کہ سڑکوں پر بھاگنے کے بجائے مرنے کو ترجیح دونگا۔ میرے گھر کا گھیرائو کر لیا گیا ہے، گھر آنے والے تمام راستے بند کر دیئے گئے ہیں۔ حکومت آصف زرداری اور فریال تالپور کے نام ای سی ایل میں ڈالے۔ اگر حکومت نے کوئی غلطی کی تو اس کی ذمہ دار حکومت خود ہوگی۔ علاوہ ازیں سابق سپیکر قومی اسمبلی اور پیپلزپارٹی کی رکن قومی اسمبلی ڈاکٹر فہمیدہ مرزا نے ذوالفقار مرزا کی سکیورٹی پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ذوالفقار مرزا کے خلاف سب کچھ باقاعدہ منصوبہ بندی کے تحت کیا جارہا ہے ، اگر ذوالفقار مرزا کے خلاف قائم مقدمات واپس نہ لئے گئے تو پورا بدین گرفتاری پیش کرے گا، بہت دن خاموش رہی تمام صورتحال کے ذمہ دار قائم علی شاہ ہیں۔ سندھ میں پولیس سیاسی ہے، وفاق سندھ میں پولیس کی سیاسی مداخلت بند کرائے۔ پولیس اور انتظامی افسران میرٹ پر تعینات نہیں ہوئے ، بدین میں چھاپوں کی شدید مذمت کرتی ہوں، وکلاء کو ذوالفقار مرزا کے مقدمات لڑنے سے روکا جارہا ہے، وفاقی حکومت سندھ میں غیرجانبدار پولیس افسران تعینات کرے، میں نہیں چاہتی کہ بے نظیر بھٹو کی طرح وکلاء کے پیچھے بھاگوں۔ وہ گزشتہ روز پریس کانفرنس سے خطاب کررہی تھیں۔ انہوں نے کہا کہ ذوالفقار مرزا کی آواز کو نہیں دبایا جا سکتا۔ حالات کے ذمہ دار وزیراعلیٰ سندھ ہیں۔ سندھ کی پولیس سیاسی ہے وفاقی حکومت سندھ میں غیر سیاسی آئی جی اور چیف سیکرٹری تعینات کرے۔ چیف جسٹس سندھ پولیس کی سیاسی مداخلت کا نوٹس لیں۔ علاوہ ازیں سابق سپیکر قومی اسمبلی فہمیدہ مرزا سے ڈی آئی جی حیدر آباد ثناء اللہ عباسی نے ملاقات کی جس میں ذوالفقار مرزا کیخلاف مقدمات سمیت دیگر معاملات پر بات کی گئی۔ علاوہ ازیں نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے فہمیدہ مرزا نے کہا کہ ہم ملک سے باہر تھے، پیچھے ہمارے اور بدین کے ساتھ جو کچھ ہوا اس سے مایوسی ہوئی۔ اگر عوام کیلئے میں کچھ نہیں کر سکتی تو پھر میرا سیٹیں لینے کا کوئی فائدہ نہیں۔ ہم ڈھائی سال بعد بول رہے ہیں تو اس کی وجوہات پر غور کرنے کی ضرورت ہے۔ علاوہ ازیں ذوالفقار مرزا نے نجی ٹی وی کو انٹرویو میں کہا ہے کہ اگر کوئی کریمنل میری طرف بڑھے گا تو مقابلہ کروں گا۔ اپنی عزت اور معصوم لوگوں کے حقوق کیلئے لڑوں گا لیاری کے معصوم لوگوں کو مارا گیا مجھے پاکستان کے سسٹم پر بھروسہ نہیں۔ رائو انوار نے زرداری کے کہنے پر پریس کانفرنس کی رائو انوار نے پریس کانفرنس سے پہلے زرداری سے ملاقات کی۔ شروع سے کہہ رہا ہوں پارٹی اور کارکنوں پر رحم کرو۔ علاوہ ازیں ایس پی بدین خالد مصطفے کورائی نے کہا ہے کہ عدالتوں کا احترام کرتے ہیں۔ کسی کو غیر قانونی کام نہیں کرنے دیں گے۔ ذوالفقار مرزا عدالت میں پیش ہونا چاہیں تو خود لے کر جائونگا۔ علاوہ ازیں ڈاکٹر فہمیدہ مرزا کی طرف سے اپنے شوہر ذوالفقار مرزا کیلئے میدان میں آنے کے بعد سابق صدر آصف علی زرداری نے وزیراعلی سندھ قائم علی شاہ کو اسلام آباد طلب کر لیا ہے۔ ذرائع کے مطابق سابق صدر آصف علی زرداری نے اپنے دیرینہ دوست ذوالفقار مرزا کیخلاف کارروائی کیلئے مخمصے کا شکار ہیں۔