ڈائریکٹر جنرل ایف سی پشاور بریگیڈیئر عثمان پر قاتلانہ حملے کی کوشش ناکام‘ محافظ کی فائرنگ سے ملزمان فرار

ڈائریکٹر جنرل ایف سی پشاور بریگیڈیئر عثمان پر قاتلانہ حملے کی کوشش ناکام‘ محافظ کی فائرنگ سے ملزمان فرار

نوشہرہ کینٹ (آن لائن) نوشہرہ کالعدم تنظیم کے تین ٹارگٹ کلرزکی فرنٹیئر کور پشاور کے ڈائریکٹر جنرل بریگیڈئیر عثمان پر قاتلانہ حملہ کی کوشش ناکام ۔فرنیٹیر کور پشاور کے ڈائریکٹر جنرل بریگیڈئیر عثمان کی موٹرکار میں موجود فرنیٹیر کور کے مسلح محافظ کی فائرنگ سے حملہ آور فائرنگ کرتے ہوئے موٹرسائیکل چھوڑ کر فرار ہوگئے۔پولیس اور سکےورٹی فورسز نے علاقے کو گھےرے میں لیکر سرچ آپریشن شروع کردیا۔ تفصیلات کے مطابق فرنیٹیر کور پشاور کے ڈائریکٹر جنرل بریگیڈئیر عثمان جو کہ نجی دورہ پر اپنے گھر نوشہرہ سے کار نمبرYU-837 اسلام آباد جارہے تھے کہ نوشہرہ کینٹ کے انتہائی حساس علاقے سی ایم ایچ کے قریب جی ٹی روڈ پر ریلوے پھاٹک اتحاد پلازہ کے مقام پر موٹرسائیکل نمبر DIK-4645 پر سوار تین نقاب پوش نوجوانوں نے گاڑی کا راستہ روکا۔ موٹرکار کے ڈرائیور حوالدار گل محمد نے پولیس کو بتایا کہ ایک نقاب پوش حملہ آور نے پستول نکال کر مجھ سے کہا کہ حاجی صاحب کون سے ہیں اور بریگیڈئیر عثمان کے بارے میں دریافت کیا۔ (فرنیٹیر کور پشاور کے ڈائریکٹر جنرل بریگیڈئر عثمان کا کوڈ نام سرکار حاجی صاحب ہے) جس پر ہم محتاط ہوگئے اور موٹرکار میں سوار گارڈ اور میں نے یک دم پستول اور کلاشنکوف سے فائرنگ شروع کردی جس پر حملہ آور موٹرسائیکل چھوڑ کر فرار ہوگئے اور فرار ہوتے ہوئے ہم پر اندھا دھند فائرنگ کردی تاہم ہم بچ گئے۔
بریگیڈئر عثمان