چارہ سکینڈل کیس: حکمران کانگریس پارٹی کے اتحادی لالو پرساد کو 5 برس سزا، نااہل قرار

چارہ سکینڈل کیس: حکمران کانگریس پارٹی کے اتحادی لالو پرساد کو 5 برس سزا، نااہل قرار

نئی دہلی (بی بی سی + اے پی پی + نوائے وقت نیوز) بھارتی ریاست بہار کے سابق وزیر اعلیٰ اور حکمران کانگریس کے اتحادی لالو پرساد یادیو کو 950 کروڑ کے 17 برس پرانے چارہ گھپلا کیس میں 5 سال قید اور 25 لاکھ روپے جرمانے کی سزا سنا دی گئی ہے اور جب وہ بہار کے وزیراعلیٰ تھے اس وقت 900 کروڑ کے چارہ کرپشن کیس میں ان کیخلاف سی بی آئی نے مقدمہ درج کیا تھا۔ بدعنوانی کے اس معاملے میں لالو اور بعض دوسرے سیاست دانوں اور اعلیٰ افسروں پر اربوں روپے کی خورد برد کا الزام ہے۔ رانچی کی ایک ذیلی عدالت نے اس مقدمے میں لالو پرشاد اور 40 سے زیادہ اہلکاروں اور سیاسی رہنماﺅں کو قصوروار قرار دیا تھا۔ اس سزا کے بعد لالو کی پارلیمان کی رکنیت ختم ہو گئی ہے اور وہ انتحاب لڑنے کے بھی اہل نہیں رہے۔ لالو کے وکیل نے کہا ہے کہ وہ اس فیصلے کو ہائیکورٹ میں چیلنج کریں گے۔ یہ سزائیں ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے انہیں جیل میں سنائی گئی۔ لالو پرساد اس وقت رانچی کی ایک جیل میں ہیں۔