سابق وفاقی وزیرقانون ڈاکٹر بابراعوان کو واجب القتل قرار دینے پر سپریم کورٹ نے پنجاب کے وزیر قانون رانا ثناءاللہ کو سات جولائی کو طلب کرلیا

سابق وفاقی وزیرقانون ڈاکٹر بابراعوان کو واجب القتل قرار دینے پر سپریم کورٹ نے پنجاب کے وزیر قانون رانا ثناءاللہ کو سات جولائی کو طلب کرلیا

جسٹس جاوید اقبال نے رانا ثنااللہ کی طرف سے ڈاکٹر بابراعوان کو واجب القتل قرار دیے جانے کے خلاف ازخود نوٹس کیس کی ان چیمبر سماعت کی جس میں سابق وفاقی وزیر قانون ڈاکٹر بابراعوان پیش ہوئے اور راناثناءللہ کی ویڈیو ریکارڈنگ اور اخباری تراشے پیش کیے جس میں انہوں نے ڈاکٹر بابراعوان کو واجب القتل قرار دیا تھا۔ اس پر جسٹس جاوید اقبال نے رانا ثناء اللہ کو سات جولائی کو طلب کرنے کے نوٹسز جاری کردیئے۔