کوئٹہ میں ٹارگٹ کلنگ کا سلسلہ جاری، مزید ایک شخص جاں بحق

کوئٹہ میں ٹارگٹ کلنگ کا سلسلہ جاری، مزید ایک شخص جاں بحق

کوئٹہ(ثناءنیوز) کوئٹہ میں ٹارگٹ کلنگ کا سلسلہ جاری، مزید ایک شخص جاں بحق۔ ہزار گنجی واقعہ کےخلاف اتوار کو شہر میں شٹر ڈاﺅن ہڑتال رہی۔تفصےلات کے مطابق اتوار کو کوئٹہ شہر میں سوگ کی کیفیت رہی ۔ کوئٹہ کے علاقے ہزار گنجی میں سات افراد کی ہلاکت کے خلاف بلوچستان شیعہ کانفرنس اورہزارہ ڈیموکریٹک پارٹی نے اتوار کو شٹر ڈاون ہڑتال کی کال دی تھی۔ ہڑتال کے باعث علمدار روڈ، مری آباد، ہزارہ ٹاﺅن سمیت شہر کے مختلف علاقوں میں شٹر ڈاون ہڑتال کی گئی۔ دکانیں اور کاروباری مراکز بند رہے اور ٹریفک بھی معمول سے کم رہی جبکہ اس واقعہ پر شہر میں سوگ کی کیفیت طاری رہی۔ دوسری جانب ہزار گنجی فائرنگ واقعہ میں جاں بحق افراد کی تدفین ہزارہ ٹاون قبرستان میں کردی گئی۔ہزار گنجی واقعہ کا مقدمہ درج کرلیا گیا جس میں 6 نامعلوم ملزمان کو نامزد کیا گیا ہے۔ واقعہ کی تحقیقات کےلئے دو ٹیمیں تشکیل دےدی گئی ہیں۔ جاں بحق ہونے والوں کی شناخت نوروز، علی بابا، جواد، سلمان علی اورسید یوسف کے نام سے ہوئی۔ شہر میں کشیدگی برقرار ہے۔ دوسری جانب سریاب روڈ پر نامعلوم افراد کی فائرنگ سے ایک اور شخص جاں بحق ہو گیا ۔ اتوار کی صبح محمد خالد نامی شخص سریاب روڈ خلبغہ گلی سے سائیکل پر جا رہا تھا کہ موٹر سائیکل پر سوار دو مسلح افراد نے اسے گولیاں مار کر قتل کر دیا ۔ سانحہ ہزار گنجی کا ایک اور زخمی چل بسا جس کے بعد گزشتہ روز سانحے میں جاں بحق افراد کی تعداد 10ہو گئی۔ کشیدہ علاقوں میں ایف سی نے گشت بڑھا دیا ہے۔