محصورین کو لانے کیلئے طیارہ جبوتی چلا گیا‘ یمن بحران پر ایران سے بات کی ضرورت نہیں : دفتر خارجہ

محصورین کو لانے کیلئے طیارہ جبوتی چلا گیا‘ یمن بحران پر ایران سے بات کی ضرورت نہیں : دفتر خارجہ

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر+نوائے وقت رپورٹ) ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق چینی بحری جہاز عدن سے 186 پاکستانیوں کو لے کر جبوتی پہنچ گیا۔ تسنیم اسلم نے ہفتہ وار میڈیا بریفنگ میں کہا ہے کہ یمن سے پاکستانیوں کے انخلاءمیں دفتر خارجہ اور دیگر ادارے مل کر کام کررہے ہیں۔ پی آئی اے کا طیارہ آج جبوتی پہنچے گا۔ صنعا ائرپورٹ کو نقصان پہنچا ہے وہاں طیارہ لینڈ کرنے میں مشکلات ہیں۔ یمن میں زیادہ تر پاکستانیوں کو نکال لیا گیا ہے کسی بھی پاکستانی کے مارے جانے کی اطلاع نہیں۔ یمن میں پھنسے تمام پاکستانیوں کی محفوظ واپسی کو یقینی بنایا جائے گا۔ 2 بحری جہاز پہلے ہی یمن پہنچ چکے ہیں جبکہ پی آئی اے کے دو طیارے پھنسے ہوئے پاکستانیوں کو واپس لانے کے لئے یمن جانے کےلئے تیار ہیں۔ وزیراعظم محمد نواز شریف مکمل امدادی آپریشن کا ذاتی جائزہ لے رہے ہیں اور دن رات اس کی نگرانی کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ صنعا میں پاکستانی سفارتخانہ بند کر دیا گیا ہے جو کام نہیں کر رہا تاہم اسلام آباد میں دفتر خارجہ میں ایک کرائسز مینجمنٹ سیل قائم کیا گیا ہے۔ ترجمان نے کہا کہ ایک خصوصی طیارہ جمعہ کو جبوتی پہنچے گا۔ ترجمان نے کہا کہ صنعا میں اب بھی 145 پاکستانی پھنسے ہوئے ہیں جن کی محفوظ واپسی کے لئے کوششیں جاری ہیں۔ صنعا میں کچھ پاکستانیوں کی اموات کے متعلق انہوں نے کہا کہ ابھی تک کسی پاکستانی کی موت کی تصدیق نہیں ہوئی۔ انہوں نے کہا کہ بہت سے پاکستانی یمن میں مقیم ہیں جو یمن سے واپس نہیں آنا چاہتے اس لئے پاکستانیوں کے بروقت انخلاءمیں تاخیر ہوئی۔ ریاض میں پاکستانی وفد کے ساتھ مذاکرات کے دوران سعودی عرب کے مطالبے سے متعلق ایک سوال پر انہوں نے کہا کہ دو ریاستوں کی سطح پر ہونے والی بات چیت پریس میں بیان نہیں کی جا سکتی۔ وزیراعظم یمن کی صورتحال کے جائزے کے لئے جلد ہی کچھ دوست ممالک کا دورہ کریں گے۔ یمن کی صورتحال پر ایران سے مشاورت نہ کرنے کے متعلق ایک سوال پر انہوں نے کہا کہ یمن کی لڑائی سعودی عرب اور ایران کے درمیان نہیں، سعودی عرب نے یمن کی صورتحال پر پاکستان سے رابطہ کیا اور اس حوالے سے پاکستان کا سعودی عرب سے رابطہ ہے۔صنعا میں محصور پاکستانی کاشف شہزاد نے کہا ہے کہ صنعا ائرپورٹ فنکشنل ہو گیا ہے۔ ہمیں صنعا ائرپورٹ سے کیوں لیکر نہیں جا رہا۔ روسی طیارہ اپنے شہریوں کو صنعا ائرپورٹ سے ہی لیکر گیا۔ محصور پاکستانی صنعا ہی سے واپس جانا چاہتے ہیں۔ مشیر ہوابازی شجاعت عظیم نے نجی ٹی وی سے گفتگو میں کہا کہ صنعا کیلئے طیارہ جلد روانہ کیا جائیگا۔ سعودی حکام کو تحریری طور پر بتا دیا ہے اجازت ملتے ہی صنعا سے پاکستانیوں کو نکال لیا جائیگا۔ دفترخارجہ کی ترجمان سے سوال کیا گیا کہ پاکستان نے صورتحال پر بات کرنے کیلئے اعلیٰ سطح کا وفد ایران کیوں نہیں بھیجا۔ انہوں نے کہا کہ اس کی کوئی ضرورت نہیں انہوں نے صحافی کے اس سوال کو مسترد کردیا جس میں اس کا کہنا تھا کہ وزیراعظم کی زیرصدارت اجلاس میں ایران کو اہم پیغام دینے کا کہا گیا ہے۔ انہوں نے صحافی سے کہا کہ یہ آپ کی وضاحت درست نہیں۔ ترجمان کا کہنا تھا کہ یمن کی صورتحال انتہائی پیچیدہ ہے اور اس کی ایک تاریخ ہے۔ اسلام آباد اور تہران میں رابطے معمول کے ہیں۔ رات گئے پی آئی اے کی پرواز اے310۔ جبوتی روانہ ہوگئی ائیربس اے 310 میں 204 مسافروں کی گنجائش ہے۔ پی کے 7003 پاکستانیوں کو لیکر آج واپس آئے گی۔
تسنیم اسلم
 
بحری جہاز