’’گرین روڈز پروگرام‘‘ کیلئے 15 ارب روپے مختص کر دیئے: شہباز شریف

’’گرین روڈز پروگرام‘‘ کیلئے 15 ارب روپے مختص کر دیئے: شہباز شریف

لاہور (خصوصی رپورٹر) وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف کی زیرصدارت گزشتہ روز اعلیٰ سطح کا اجلاس منعقد ہوا جس میں پنجاب کے دیہی علاقوں میں ’’خادم پنجاب گرین روڈز پروگرام‘‘ کا منصوبہ شروع کرنے کا فیصلہ کیا گیا اور رواں مالی برس کے دوران اس پروگرام کیلئے 15 ارب روپے کی خطیر رقم مختص کرنے کی منظوری دی گئی۔  شہبازشریف نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دیہی علاقوں میں سڑکوں کی بحالی کے پروگرام سے زرعی معیشت نہ صرف ترقی کریگی بلکہ روزگار کے نئے مواقع بھی پیدا ہوں گے اور عوام کو آمدورفت کی تیز رفتار سہولتیں میسر آئیں گی۔سڑکوں کی بحالی کے پروگرام سے تجارتی، معاشی، سماجی اور اقتصادی سرگرمیاں بھی بڑھیں گی۔  دیہی علاقوں میں سڑکوں کی بحالی کا یہ پروگرام انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔ ’’گرین  روڈ پروگرام‘‘ کیلئے رواں مالی سال کے دوران 15 ارب روپے کی خطیر رقم مختص کی گئی ہے۔ ’’خادم پنجاب گرین روڈز پروگرام‘‘ کے تحت بننے والی تمام سڑکوں کی کارپیٹنگ ہوگی۔سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں بھی سڑکوں کی تعمیر و مرمت کیلئے کارپیٹنگ ہوگی۔ دیہی علاقوں میں سڑک کی چوڑائی کم از کم 12 فٹ ہوگی۔ وزیراعلیٰ نے ہدایت کی کہ سڑکو ںکی دیکھ بھال کیلئے موثر میکانزم مرتب کیا جائے اور ڈویژنل کمشنرز کی زیرنگرانی کمیٹیاں تشکیل دی جائیں۔ سڑکوں کی تعمیر و مرمت کے ساتھ پانی کے نکاس کیلئے ڈرینج نظام بھی بنایا جائے۔ سڑکوں کے اطراف شجرکاری کیلئے پودے اور درخت لگائے جائیں۔ سڑکوں کے معیار کو جانچنے کیلئے تھرڈ پارٹی آڈٹ سسٹم کی پالیسی پر عمل کیا جائیگا۔ وزیراعلیٰ نے صوبے کی تمام چھوٹی بڑی سڑکوں کا ڈیٹا بینک بنانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ پنجاب انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ تمام سڑکوں کا ڈیجیٹل ریکارڈ مرتب کرے اور تمام متعلقہ ادارے باہمی رابطے کے تحت کام کریں۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ دیہی علاقوں میں سڑکوں کی تعمیر ومرمت کے پروگرام کی ذاتی طور پر نگرانی کروں گا اور ہر پندرہ روز بعد پیشرفت کا جائزہ لوں گا۔  علاوہ ازیں شہبازشریف کی زیر صدارت گزشتہ روز  اعلیٰ سطح کا اجلاس ہوا جس میں عوام کو ایک ہی چھت تلے مختلف خدمات کی فراہمی کیلئے صوبے بھر میں سہولت سینٹرز قائم کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ شہبازشریف نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ عوام کو فوری اور بہترین خدمات کی فراہمی ہمارا ایجنڈا ہے۔ عوام کو ایک ہی چھت تلے مختلف خدمات کی فراہمی کیلئے پنجاب کے تمام اضلاع میں سہولت سینٹرز قائم کئے جائیں گے۔ سہولت سینٹرز کے قیام سے عوام کو خدمات کے حصول کیلئے مختلف دفاتر کے چکر نہیں لگانے پڑیں گے۔ وزیراعلی نے  ایڈیشنل چیف سیکرٹری کی سربراہی میں کمیٹی تشکیل دیتے ہوئے ہدایت کی کہ کمیٹی صوبے کے تمام اضلاع میں سہولت کے  سینٹرز کے قیام کا جامع پلان مرتب کر کے پیش کرے اور عوام کو سہولتوں کی فراہمی اور عوامی خدمت ہمارا اوڑھنا بچھونا ہے۔ سہولت  سینٹرز کے قیام کیلئے نئی عمارتوں کی تعمیر کی بجائے پہلے سے موجود عمارتوں کو استعمال میں لایا جائے۔ اس مقصد کیلئے صوبے بھر میں سروے کرایا جائے۔ ایک ہی چھت تلے  خدمات کی فراہمی کیلئے سینٹرز کے قیام کا منصوبہ انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔ مفاد عامہ کے اس منصوبے کو تیزرفتاری سے پایہ تکمیل تک پہنچانے کیلئے ہرممکن اقدامات کئے جائیں۔ سہولت سینٹرزپر ایک ہی جگہ خدمات کی فراہمی سے شہریوںکا قیمتی وقت بھی بچے گا۔ وزیراعلیٰ نے ٹریفک کے حوالے سے شہریوں کو درپیش مشکلات کے پیش نظر سی ٹی او کو ہدایت کی کہ ٹریفک کے بہائو کو بہتر بنانے کیلئے موثر اقدامات کئے جائیں۔ مزید برآں شہبازشریف نے کہا ہے کہ حکومت نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں مسلسل تیسری بار کمی کرکے عوام کے دل جیت لئے ہیں۔ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں نمایاں کمی مسلم لیگ (ن) کی حکومت کا عوام کو نئے سال کا تحفہ ہے۔  پٹرولیم کی مصنوعات کی قیمتوں میں ایک بار پھر کمی خوش آئندہے تاہم پٹرولیم مصنوعات کی کمی کا فائدہ براہ راست عوام کو پہنچنا چاہئے۔ وزیراعلیٰ نے ہدایت کی کہ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کے تناسب سے اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں کمی لانے کیلئے اقدامات کئے جائیں۔ ٹرانسپورٹ کے کرایوں میں بھی اسی تناسب سے کمی ہونی چاہئے جس شرح سے پٹرولیم مصنوعات کے نرخ کم کئے گئے ہیں۔ وزیراعلیٰ نے ہدایت کی کہ پٹرولیم مصنوعات کی مقررہ نرخوں پر فراہمی ہر صورت یقینی بنائی جائے۔ کسی پٹرول پمپ پر پٹرولیم مصنوعات کی عدم دستیابی یا زائد نرخ پر فروخت کی شکایت نہیں ہونی چاہئے۔  دریں اثنا  شہبازشریف نے کہا ہے کہ عوام کو بہترین خدمات کی فراہمی ہمارا مشن ہے اور اس مقصد کی تکمیل کیلئے ہرممکن وسائل بروئے کار لائے جا رہے ہیں۔ شہریوں کو خدمات کی فراہمی کا عمل بہتر بنانے کیلئے سٹیزن فیڈ بیک کا پروگرام شروع کیا گیا ہے، سٹیزن فیڈبیک ماڈل کے ذریعے شہریوں کو خدمات فراہم کرنے والے محکموں اور اداروں کی کارکردگی میں بہتری لائی جاسکتی ہے اور اس مقصد کیلئے سٹیزن فیڈ بیک ماڈل کا دائرہ کار مزید بڑھانے اور اس پر موثر عملدرآمد کیلئے ادارہ جاتی ڈھانچہ تشکیل دینے کی اشد ضرورت ہے۔ وہ گزشتہ روز ماڈل ٹاؤن میں اعلیٰ سطح کے اجلاس سے خطاب کر رہے تھے۔ اجلاس کے دوران وزیراعلیٰ نے سٹیزن فیڈبیک ماڈل کا دائرہ کار مزید بڑھانے کی منظوری دیتے ہوئے ایک سٹیرنگ کمیٹی قائم کرنے کی ہدایت کی۔ شہبازشریف نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سٹیزن فیڈبیک ماڈل اداروں کی کارکردگی میں بہتری لانے اور عوام کو بہتر خدمات کی فراہمی کیلئے سودمند ثابت ہوا ہے۔ اس ماڈل کے تحت حاصل ہونیوالے سٹیزن فیڈبیک کا فرانزک تجزیہ انتہائی ضروری ہے۔ ماڈل کے تحت شہریوں کو معیاری خدمات کی فراہمی کیلئے پرفارمنس مینجمنٹ پر توجہ دینا ہوگی۔ شہریو ںکی سہولت اور انہیں تیز رفتار سروس کی ڈلیوری کیلئے موثر اصلاحات کی جائیں۔ سٹیزن فیڈ بیک ماڈل کی ضلع اور ڈویژن کی سطح پر باقاعدگی سے مانیٹرنگ ہونی چاہئے۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ سٹیرنگ کمیٹی سٹیزن فیڈ بیک ماڈل کی بہتر انداز میں مانیٹرنگ اور احتساب کے عمل کو موثر بنانے کے حوالے سے بھی سفارشات مرتب کریگی اور 7 روز کے اندر رپورٹ پیش کریگی۔ شہبازشریف  سے گزشتہ روز مختلف اضلاع  سے تعلق رکھنے والے ارکان قومی و صوبائی  اسمبلی نے ملاقات کی۔  شہبازشریف  نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان  نازک ترین دور سے گزر رہا ہے۔ پشاور  کے سکول میں معصوم بچوں اور اساتذہ کے ساتھ بدترین  بربریت کا مظاہرہ کیا گیا۔ انہوں  نے کہا کہ پوری  قوم ابھی تک سانحہ پشاور پر غمزدہ ہے۔ شہداء  کے خون کے ایک ایک قطرے  کا سفاک درندوں سے حساب لیں گے۔ شہبازشریف نے اس امیدکا اظہار کیا ہے کہ نیا سال پاکستان میں حقیقی امن کا پیغام لیکر آئیگا۔ نیا سال ملک سے دہشت گردی کے خاتمے کا سال ثابت ہوگا اور پاکستان میں ترقی اور خوشحالی کا سورج طلوع ہوگا۔نئے برس میں پرامن ترقی یافتہ اور خوشحال پاکستان کا خواب شرمندہ تعبیر ہوگا۔ 18 کروڑ عوام کے اتحاد اور اتفاق سے ملک کو دہشت گردوں سے پاک کریں گے۔ اپنے بچوں اور نئی نسلوں کو پرامن اور محفوظ پاکستان دیں گے۔ نئے سال کے موقع پر اپنے پیغام میں انہوں نے کہا کہ ملک کو قائدؒ اور اقبالؒ کے تصورات کے مطابق صحیح معنوں میں اسلامی فلاحی ریاست بنائیں گے۔ علاوہ ازیں  شہباز شریف  نے سابق آئی جی  پولیس پنجاب  طارق سلیم ڈوگر  کی والدہ کے انتقال  پر گہرے دکھ  اور افسوس کا اظہار کیا ہے۔  شہبازشریف نے علامہ شاہ احمد نورانی  صدیقی  مرحوم کے رفیق  خاص و استاد  ممتاز  عالم دین قاری رضا المصطفیٰ  اعظمی  کے انتقال پر  بھی گہرے دکھ  کا اظہار کیا ہے۔