متحدہ سے لڑانے کی سازشیں کی گئیں ‘ ملک کو سیاست کی کم خدمت کی زیادہ ضرورت ہے: زرداری

متحدہ سے لڑانے کی سازشیں کی گئیں ‘ ملک کو سیاست کی کم خدمت کی زیادہ ضرورت ہے: زرداری

کراچی (نوائے وقت نیوز + ایجنسیاں) صدر زرداری نے کہا ہے کہ پاکستان کو کم از کم 5 بندر گاہوں والا پاکستان بنائیں گے،لیاری ایکسپریس وے کا منصوبہ ایم کیو ایم کے بغیر نہیں بن سکتا، آج عالمی برداری بھی مفاہمت کی باتیں کرتی ہے، پاکستان کو سیاست کی کم اور خدمت کی زیادہ ضرورت ہے، فضول سیاست اور لڑائی جھگڑے سے نقصان ہوا، دونوں جماعتوں کو لڑانے کیلئے دونوں طرف کے لوگ قتل ہوئے، پیپلز پارٹی اورایم کیو ایم کے مختلف خیالات ہونے کے باوجود ہم نے ایم کیو ایم سے اتحاد کو جاری رکھا، ہمیںایم کیو ایم سے لڑانے کی کوشش کی گئی،کراچی کا نقصان پورے ملک کا نقصان ہے، مفاہمت کی پالیسی کے نتائج تصادم کی سیاست سے بہت بہتر ہیں، شہید بینظیربھٹو کی بصیرت کے مطابق ترقیاتی کام کررہے ہیں۔کراچی میں لیاری ایکسپریس وے کی تقریب سے خطاب میں زرداری نے کہا ہے کہ پاکستان جمہوریت کی وجہ سے آج ترقی کررہا ہے، جمہوریت کو پھلتے پھولتے دیکھنا چاہتے ہیں،بہت قربانیوں کے بعد جمہوریت کا پودا جڑ پکڑ رہا ہے، جب ہم نے دیکھا کہ ایم کیو ایم اور پیپلز پارٹی کی لڑائی سے کسی اور کو فائدہ ہورہا ہے تو ہم نے مفاہمت کی پالیسی کو اپنایااور آج کامیابی کے ساتھ اپنے پانچ سال پورے کررہے ہیں۔ علاوہ ازیں کراچی کے مختلف علاقوں میں سی سی ٹی وی کیمروں کی تنصیب حوالے سے تقریب سے خطاب میں صدر نے کہا کہ حکومت جلد کراچی سے جرائم پیشہ عناصر کا خاتمہ کر دیگی کراچی معاشی حب ہے اس کے امن کو تباہ کرنے کی کسی کو اجازت نہیں دی جائیگی۔ قانون نافذ کرنیوالے ادارے جرائم پیشہ عناصر کیخلاف ٹارگٹڈ کارروائیاں تیز کردیں۔ قبل ازیں گورنر اور وزیراعلی سندھ سے ملاقات میں صدر نے کہا کہ آئندہ انتخابات کے شفاف انعقاد سے ملک میں جمہوریت مزید مضبوط ہو گی۔ حکومت عوام کے مسائل سے غافل نہیں۔ اس وقت ملک کو سب سے بڑا چیلنج دہشتگردی اور انتہا پسندی کا ہے اس کے خاتمے کیلئے حکومت کے ساتھ عوام، سیاسی قوتوں اور معاشرے کے ہر طبقے کو اپنا کردارادا کرناہو گا۔ ایڈز کے عالمی دن کے حوالے سے اپنے پیغام میں صدر زرداری نے بین الاقوامی برادری پر زور دیا کہ وہ علم و مہارت کے تبادلے سے مہلک بیماری کے خطرات کم کرنے میں ترقی پذیر اور پسماندہ ممالک کی مدد کرے۔