صدر شوری ٰ رکنیت کا اہل نہیں تو اصغر خان کیس اور آرٹیکل 63 کیسے لاگو ہو گا : ہائیکورٹ

صدر شوری ٰ رکنیت کا اہل نہیں تو اصغر خان کیس اور آرٹیکل 63 کیسے لاگو ہو گا : ہائیکورٹ

لاہور(آن لائن) لاہور ہائیکورٹ نے اصغر خان کیس کے فیصلے کی روشنی میں صدر آصف علی زرداری کو نااہل قرار دینے کے لئے دائر درخواست کی سماعت 5 دسمبر تک ملتوی کر تے ہوئے درخواست گزار کے وکیل کو پٹیشن کے قابل سماعت ہونے سے متعلق مزید دلائل کے لئے طلب کر لیا۔ لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس ناصر سعید شیخ نے کیس کی سماعت کی۔جماعت اسلامی کے وکیل اے کے ڈوگر نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ آصف علی زرداری سیاسی جماعت کے سربراہ ہونے کی بناءپر مجلس شوری کے رکن بننے کی اہلیت کے معیار پر بھی پورا نہیں اترتے۔ سپریم کورٹ کے اصغر خان کیس کے فیصلے کی روشنی میں صدر مملکت دو عہدے رکھنے کی بنائ پر بھی اہلیت کے معیار کو پورا نہیں کرتے۔ انہوں نے عدالت کو آگاہ کیا کہ زرداری کوانتخابات سے قبل اور صدارتی انتخاب کے بعد دوہری نااہلی کا سامنا ہے۔ عدالت نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ پٹیشن میں صدر کے انتخاب سے قبل کی اہلیت کو چیلنج کیا گیا ہے۔ عدالت کو آگاہ کیا جائے کہ اگر صدر مملکت مجلس شوری کے رکن بننے کی اہلیت کو ہی پورا نہیں کرتے تو اصغر خان کیس کے فیصلے اور آئین کے آرٹیکل تریسٹھ کا اطلاق صدر پر کیسے کیا جا سکتا ہے۔