شاہ کوٹ سلنڈر پھٹ گیا 4 مسافر زندہ جل گئے بھیرہ گاڑی لٹ گئی ماں 4 بچے جاں بحق

ننکانہ صاحب/ شاہ کوٹ/ بھیرہ/ پھلروان (نمائندہ خصوصی+ نامہ نگاران) بھیرہ میں ٹریفک حادثے میں ماں 4 بچوں سمیت 5 افراد جاں بحق‘ 6 زخمی ہوگئے۔ شاہ کوٹ میں وین کا سلنڈر لیک ہونے سے آگ بھڑک اٹھی جس سے ماں بیٹے سمیت 4 افراد زندہ جل گئے۔ 14 مسافر شدید زخمی ہیں۔ شاہ کوٹ سے نامہ نگار کے مطابق مین بازار میں پوسٹ آفس کے قریب گزرتی مسافر وین کا گیس سلنڈر لیک ہونے کے باعث گاڑی میں اچانک آگ بھڑک اٹھی جس کے نتیجے میں ماں بیٹا اور خاتون سمیت 4 افراد جاں بحق جبکہ 14 افراد شدید زخمی ہو گئے۔ فیصل آباد سے شیخوپورہ جانیوالی مسافر وین کے ڈرائیور نے شاہ کوٹ کا ٹال پلازہ بچانے کے لئے اسے شہر کے اندرونی راستے سے گزارا تو شاہ کوٹ پوسٹ آفس کے قریب اچانک گاڑی کا سلنڈر لیک ہو گیا اور دیکھتے ہی دیکھتے آگ نے پوری گاڑی کو اپنی لپیٹ میں لے لیا جس سے صفدر آباد کی رہائشی خاتون حفیظاں بی بی اور اسکے کمسن بیٹے اور ایک خاتون تنزیلہ بی بی سمیت 4 افراد جاںبحق ہو گئے جبکہ محمد فیاض‘ تنزیلہ فیاض‘ اسد فیاض‘ ایمان فیاض‘ علی حسین‘ عظمت علی‘ زاہدہ بی بی‘ سعدیہ بی بی سمیت 14افراد شدید زخمی ہو گئے جنہیں انتہائی تشویشناک حالت کے پیش نظر الائیڈ ہسپتال فیصل آباد منتقل کر دیا گیا جہاں 4 افراد کی حالت نازک بیان کی جاتی ہے۔ واقعہ کی اطلاع ملتے ہی ریسکیو کی امدادی ٹیموں سمیت پولیس اور انتظامیہ کی درجنوں گاڑیاں موقع پر پہنچ گئیں جنہوں نے بروقت زخمیوں کو مقامی ہسپتال پہنچایا اور گاڑی کے اطراف متوقع سلنڈر دھماکے کے پیش نظر 100فٹ تک جگہ خالی کرا لی۔ ڈاکٹرز کے مطابق جھلسنے والے تمام افراد کا جسم 80 فیصد تک جلا ہوا ہے۔ ننکانہ صاحب سے نامہ نگار کے مطابق گیس سلنڈر پھٹنے سے وین مالک اور کنڈکٹر سمیت 14مسافر شدید زخمی ہیں۔ ڈرائیور موقع سے فرار ہو گیا، وین مالک اور کنڈکٹر زخمی حالت میں گرفتار کر لیا گیا۔ دھماکہ اس قدر شدید تھا اردگرد دکانوں کے شیشے ٹوٹ گئے اور دکاندار اپنی دکانیںچھوڑ کر بھاگ گئے۔ بھیرہ سے نامہ نگار کے مطابق لاہور سے کیری ڈبہ میں مری جانے والے ایک ہی خاندان کے 13افراد موٹروے انٹر چینج بھیرہ کے قریب خوفناک حادثہ کا شکار ہو گئے جس میں دو خواتین اور تین بچوں سمیت پانچ افراد جاں بحق جبکہ 8 افراد شدید زخمی ہو گئے۔ کیری ڈبہ میں ایک ہی خاندان کے سوار 13افراد سبزہ زار لاہور سے سیر کیلئے مری جارہے تھے وہ جب موٹروے انٹر چینج بھیرہ کے قریب پہنچے تو پیچھے سے آنے والی مزدا گاڑی نے کیری ڈبہ کو ٹکر مار دی جس کے نتیجہ میں کیری ڈبہ قلابازیاں کھاتا نیچے جاگرا۔ موٹروے پولیس کے انسپکٹر رانا غلام مجتبیٰ نے زخمیوں کو ٹی ایچ کیو ہسپتال بھیرہ پہنچایا۔ حادثہ کی اطلاع ملتے ہی بد قسمت خاندان کے لواحقین ہسپتال پہنچ گئے۔ حادثہ کی وجہ مزدا گاڑی کے ڈرائیور کا گاڑی چلاتے سو جانا بیان کی گئی ہے جس دوران مزدا بے قابو ہو کر آگے جانے والے کیری ڈبہ سے ٹکرا گیا۔ زخمیوں کو فوری طور پر ٹی ایچ کیو ہسپتال بھیرہ پہنچایا گیا لیکن ہسپتال میں ایم ایس، ڈاکٹروں اور عملہ کی عدم موجودگی پر زخمیوں کے لواحقین نے سخت احتجاج کیا۔ پھلروان سے نامہ نگار کے مطابق موٹروے پر سالم کے نزدیک لاہور کے علاقے سبزہ زار کے شوکت اور ذوالفقار کے اہل خانہ سیرو تفریح کے لیے کیری ڈبہ میں مری جا رہے تھے موٹروے پر پھلروان کے نزدیک پیچھے سے آنے والے مزدا ڈالے نے ٹکر دے ماری جس سے سدرہ بیگم زوجہ شوکت علی، مہرین، واصف، ہمنا، ہادیہ موقع پر ہی جاں بحق ہو گئے جبکہ مصباح، ساجد، لائبہ، نعمان، دانش زخمی ہو گئے جنہیں طبی امداد کے بعد لاہور ہسپتال ریفر کر دیا گیا۔ اس حادثہ میں چھ ماہ کا بچہ قاسم ماں کی گود میں زندہ سلامت رہا، کوئی خراش بھی نہ آئی۔ ڈالے کا ڈرائیور فرار ہو گیا۔ پھلروان پولیس نے مقدمہ درج کر کے کارروائی شروع کر دی۔ وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف نے سرگودھا موٹروے انٹرچینج کے قریب ٹریفک حادثے میں ایک ہی خاندان کے 5 افراد اور شاہ کوٹ میں مسافر وین میں آگ لگنے سے ہونے والی ہلاکتوں کے واقعہ پر افسوس کا اظہار کیا ہے۔ وزیراعلیٰ نے جاں بحق افراد کے لواحقین سے ہمدردی اور تعزیت کا اظہار کیا ہے۔ وزیراعلیٰ نے مسافر وین میں آگ لگنے کے واقعہ کی تحقیقات کا حکم دیتے ہوئے انتظامیہ سے رپورٹ طلب کر لی ہے۔ نوائے وقت رپورٹ کے مطابق جھنگ روڈ مظفر گڑھ پر ٹریلر نے موٹر سائیکل کو ٹکر مار دی جس سے 3 افراد جاں بحق جبکہ 2 بچیاں زخمی ہو گئیں۔
حادثات