وہاڑی ہسپتال کے ایمرجنسی وارڈ سے ڈاکٹرز غائب ‘ خاتون جاں بحق ‘ ورثا کا لاش سڑک پر رکھ کر احتجا ج

وہاڑی ہسپتال کے ایمرجنسی وارڈ سے ڈاکٹرز غائب ‘ خاتون جاں بحق ‘ ورثا کا لاش سڑک پر رکھ کر احتجا ج

وہاڑی ( نمائندہ نوائے وقت ) ڈی ایچ کیوہسپتال کی ایمرجنسی وارڈ میں ڈاکٹرز کی مبینہ غیر حاضری کی وجہ سے 45سالہ خاتون جاں بحق ورثاءکا نعش ایمر جنسی وارڈ کے سامنے رکھ کر غیر حاضر ڈاکٹرزو دیگر سٹاف کے خلاف احتجاج خادم اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف سے نوٹس لینے کا مطالبہ تفصیل کے مطابق 58/WBرتہ ٹبہ کے رہائشی ذوالفقار،مشتاق احمد لنگڑیال ،عباس ، جاوید ،عبدالستار، فیصل،محمد امیر،محمد اقبال،معین ،بلال ،طارق ،نور محمد و دیگر درجنوں افراد نے ڈی ایچ کیو ہسپتال انتظامیہ اورغیر حاضر ڈاکٹر رانا یعقوب کے خلاف شدید احتجاج کرتے ہو ئے میڈیا کو بتایا کہ صبح تقریبا 6بجے کے قریب اپنی والدہ سباں بی بی کو بلڈ پر یشر کی وجہ سے طبیعت خراب ہو نے کی وجہ سے ایمر جنسی وارڈ میں لے کر آئے تو ڈیوٹی پر کو ئی بھی ڈاکٹر موجود نہیں تھا اور نہ کسی سٹاف کسی دوسرے ملازم نے ہماری والدہ کی کوئی ٹریٹمنٹ نہ کی جس کی وجہ سے مریضہ کی حالت مزید خراب ہو گئی اور تقریبا3گھنٹے زندگی اور موت کی کشمکش میں رہنے کے بعد ڈاکٹرز کی غیر حاضری کی وجہ سے جاں بحق ہو گئی اس وقت ایمر جنسی وارڈ میں کو ئی بھی ڈاکٹر موجود نہ تھا جاں بحق ہونے والی خاتون کے ورثاءنے مزید کہا کہ اگر ہماری والدہ کی بر وقت ٹریٹمنٹ کی جاتی تو ہماری والدہ بچ سکتی تھیں جاں بحق ہونے والی خاتون کے ورثاءنے خادم اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف سے ڈیوٹی سے غیر حاضر ڈاکٹر و دیگر عملہ کے خلاف نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے اس حوالہ سے جب ڈی ایچ کیو ہسپتال کے ایم ایس ڈاکٹر محمد اشرف سے مو قف لینے کے لیئے رابطہ کیا گیا تو انھوں فون اٹینڈ نہ کیا ۔