جامعہ زکریا کی انتظامیہ کا ”کمال“ سلیکشن بورڈ میں بغیر ایجنڈا پروموشن کیس شامل

جامعہ زکریا کی انتظامیہ کا ”کمال“ سلیکشن بورڈ میں بغیر ایجنڈا پروموشن کیس شامل

ملتان (وقائع نگار خصوصی) ذرائع کے مطابق بہاءالدین زکریا یونیورسٹی کے سلیکشن بورڈ میں ایک ایسوسی ایٹ پروفیسر کو پروفیسر کے عہدے پر ترقی دینے کا کیس ریگولر ایجنڈے سے ہٹ کر شامل کیا گیا ہے۔ اس سلسلہ میں زکریا یونیورسٹی کے ایک ممبر سینڈیکیٹ نے وائس چانسلر کو درخواست دی ہے کہ ایسوسی ایٹ پروفیسر عبدالقدوس صہیب کے 12 ریسرچ پیپرز چوری شدہ مواد پر مشتمل ہیں۔ زکریا یونیورسٹی نے ان کے خلاف کارروائی کرنے کی بجائے ان کو پروفیسر کے عہدے پر ترقی دینے کیلئے ان کا کیس سلیکشن بورڈ میں رکھوا دیا ہے۔ ذرائع نے بتایا ہے کہ موجودہ وائس چانسلر نے زکریا یونیورسٹی میں بطور ڈین تعیناتی کے دوران وزیراعلیٰ پنجاب کو درخواست دی تھی کہ عبدالقدوس صہیب کے ریسرچ پیپرز چوری شدہ مواد پر مشتمل ہیں ان کے خلاف کارروائی کی جائے۔ ذرائع کے مطابق ریسرچ پیپرز چوری کیس میں وائس چانسلر مدعی رہے ہیں لیگل پوائنٹ آف ویو سے وہ سلیکشن بورڈ میں بیٹھنے کے اہل نہیں ہیں۔
 پروموشن کیس