دورحاضر کے مسائل حل کرنے کیلئے ادارے اجتماعی اجتہاد کا کام شروع کریں: ڈاکٹر طاہر امین

دورحاضر کے مسائل حل کرنے کیلئے ادارے اجتماعی اجتہاد کا کام شروع کریں: ڈاکٹر طاہر امین

ملتان (نمائندہ نوائے وقت) بہاء الدین زکریایونیورسٹی ملتان کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر طاہر امین نے سیمینار بعنوان ’ ’ حجتہ اللہ البالغہ از حضرت امام شاہ ولی اللہ‘‘ سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ حضور ﷺ نے جو دین پیش کیا اس کی بنیاد ایک وحی الہی پر تھی اور پھر اس کو رسولﷺ نے عقلی دلائل اور ثبوت کے ساتھ پیش کیا۔ اورلوگوںکے لیے شریعت کو عملی طور پرآسان بنا کر پیش کیا ۔ آج ضرورت اس امر کی ہے کہ ہمارے ادارے اجتماعی اجتہاد کا کام شروع کریں تاکہ دور حاضر کے مسائل کو حل کیا جاسکے۔ وائس چانسلر نے کہا کہ آج دنیا سمٹ کر گلوبل ویلج بن گئی ہے اس لیے معاملات کو اب عالمی تناظر میں دیکھنے کی ضرورت ہے۔انہوںنے کہا کہ شعبہ علوم اسلامیہ اور اسلامک ریسرچ سنٹر علم اور تحقیق کے کام میں مصروف عمل ہے۔ اور یہ بات ہمارے لیے خوش آئند ہے۔ پروفیسر ڈاکر سعید الرحمن نے کہاکہ شاہ ولی اللہ محدث دہلوی نے شرعی احکام کی عقلی توجیحات اور اسرارو حکم پر بحث کی ہے۔ جس سے عصر حاضر میں رہنمائی لینے کی ضرورت ہے۔ ہمیں نقلی دلائل کے ساتھ عقلی دلائل کو بھی بیان کرنا چاہیے تاکہ لوگوں کا یقین مزید بڑھے۔انہوں نے کہاکہ یہی علم آج کے دور میں فائدہ مند ثابت ہوسکتا ہے۔ چیئرمین شعبہ علوم اسلامیہ پروفیسر ڈاکٹر عبدالقدوس صہیب نے کہاکہ ہمارے اداروں میں قرآن و سنت کی تعلیم کی بنیاد پر اجتہادی عمل کو فروغ دینا چاہیے۔