لوڈشیڈنگ کا مسئلہ مستقل طور پر حل کرینگے‘ ملتان کی ترقی کیلئے شفاف منصوبے لائینگے‘ ماضی میں جیبیں گرم کی گئیں: حمزہ شہباز

لوڈشیڈنگ کا مسئلہ مستقل طور پر حل کرینگے‘ ملتان کی ترقی کیلئے شفاف منصوبے لائینگے‘ ماضی میں جیبیں گرم کی گئیں: حمزہ شہباز

ملتان (سپیشل رپورٹر) پاکستان مسلم لیگ ”ن“ کے مرکزی رہنما و ایم این اے حمزہ شہباز شریف نے کہا ہے کہ توانائی کا بحران ختم کرنے کے لئے ”ن“ لیگ حکومت سنجیدہ کوشش کر رہی ہے۔ ہم عارضی ریلیف دینے کی بجائے مستقل طور پر اس مسئلہ سے جان چھڑانا چاہتے ہیں۔ ماضی میں ملتان میں ترقیاتی منصوبوں کی آڑ میں اپنی جیبیں گرم کرنے کی پالیسی بنی مگر ”ن“ لیگ دیانتدارانہ اور شفاف و پائیدار منصوبے بنائے گی۔ پارٹی کی شکست کو بھلا کر اب کارکن ملکر کام کریں۔ تاہم پارٹی کو نقصان پہنچانے والے عناصر کا محاسبہ ہو گا۔ جو کارکن میرٹ پر ہو گا اسے اب عزت ملے گی۔ رمضان المبارک میں لوڈشیڈنگ کا دورانیہ کم ہو گا۔ عوام کو ضروریات زندگی کی اشیاءپر رمضان المبارک میں ساڑھے 3 ارب روپے کی سبسڈی دی جائے گی۔ پارٹی کی فعال کمیٹیاں بنائی جائیں گی اور ان کمیٹیوں کو بااختیار بنایا جائے گا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز ملتان میں پارٹی کارکنوں کے اجلاس اور صحافیوں سے گفتگو کے دوران کیا۔ اس موقعہ پر انہوں نے مزید کہا کہ توانائی کے بحران کا خاتمہ ”ن“ لیگ کی اولین ترجیح ہے۔ لوڈشیڈنگ نے عام آدمی کی زندگی کو اجیرن بنا دیا ہے۔ ہم انشاءاللہ آئندہ آنے والے سالوں میں اس مسئلہ کو مستقل طور پر حل کر دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی کے ورکر اور مخلص و سچے کارکن ہمارا اثاثہ ہیں۔ اب وفاق اور پنجاب دونوں میں ہماری حکومت ہے تو انہیں ہر صورت اکاموڈیٹ کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ رمضان المبارک میں فی کلو آٹا پر 5 روپے کی رعایت دی جائے گی۔ اسی طرح رمضان میں سکیورٹی کی صورتحال کو بھی کنٹرول کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ ماضی میں ملتان میں ایسے منصوبے لائے گئے جو اپنی جیبیں بھرنے کے لئے تھے۔ عوام انہیں اچھی طرح جانتے ہیں۔ ”ن“ لیگ کی دیانت داری دیکھ کر انہیں مینڈیٹ ملا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مون سون میں علاقوں میں پانی جمع ہو جاتا ہے۔ اس موقعہ پر ہم ایسی حکمت عملی تشکیل دے رہے ہیں کہ پانی جمع ہی نہ ہو سکے۔ انہوں نے کہا کہ نشتر ہسپتال میں نرسنگ کے مطالبات پر ایک انکوائری کمیٹی بنائی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی کی بنائی گئی کمیٹیاں کاغذی نہیں ہوں گی۔ انہیں ازحد عزت و تکریم دینا ہو گی۔ بعدازاں حمزہ شہباز شریف نے شمس آباد کالونی میں قائم سستے رمضان بازاروں کا دورہ کیا۔ انہوں نے ضلعی انتظامیہ کو ہدایت کی کہ وہ رمضان میں اشیاءخوردو نوش کی سستے داموں فراہمی کو یقینی بنائیں۔ رمضان المبارک میں وزیراعلیٰ پنجاب میں شہباز شریف ماڈل رمضان بازاروں کا خود دورہ کریں گے۔ رمضان بازاروں کے لئے انتظامیہ کشادہ اور صاف ستھری جگہوں کا انتخاب کریں جبکہ پارکنگ اور بیت الخلاءکابھی خاطر خواہ بندوبست کیا جائے۔ اس موقعہ پر انہوں نے مزید کہا کہ رمضان بازاروں میں شکایات سنٹر قائم کئے جائیں۔ جہاں تمام متعلقہ محکموں کے فوکل پرسن کی موجودگی کو یقینی بنایا جائے۔ ان سنٹر کا ڈی سی او دفاتر میں قائم کنٹرول روم سے مربوط رابطہ استوار کیا جائے تاکہ کسی بھی صارف کی شکایت کا ازالہ ہو سکے۔ چیزوں کے معیار پر کوئی سمجھوتہ نہیں ہو گا۔ رمضان بازاروں میں یوٹیلٹی سٹورز کے سٹال بھی لگائے جائیں گے۔ اسی طرح صوبائی وزیر اپنے اضلاع کے انچارج بھی ہونگے۔ صوبائی وزیر خوراک بلال یاسین نے کہا کہ مون سون بھی رمضان المبارک میں آ رہا ہے۔ رمضان المبارک میں ان بازاروں کی جگہ کا تعین بارشوں کو مدنظر رکھ کر کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ تمام ڈی سی اوز کی رینکنگ بھی ان رمضان بازاروں کی کارکردگی سے لگائی جائے گی جبکہ ڈی سی اوز اہل ثروت افراد کے تعاون سے رمضان دستر خوان بھی لگائیں۔ اس سے قبل کمشنر ملتان ڈویژن سید علی مرتضیٰ نے بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ ملتان ڈویژن میں 21 رمضان بازار لگائے جائیں گے جس کے لئے 119 پرائس مجسٹریٹ صاحبان بھی تعینات ہونگے۔ سی پی او ملتان غلام محمود ڈوگر نے کہا کہ 1136 مساجد ہیں جہاں تراویح کے اوقات میں 4 ایس پی صاحبان کی سربراہی میں سکیورٹی پلان تشکیل دیا گیا ہے۔ اسی طرح رمضان بازاروں کے لئے بھی سکیورٹی پلان تشکیل دیا گیا ہے۔ سرکٹ ہا¶س میں منعقد ہونے والی اس میٹنگ میں صوبائی وزیر عبدالوحید آرائیں‘ ممبران قومی اسمبلی سید جاوید علی شاہ‘ سید دیوان عاشق بخاری‘ محترمہ تہمینہ دولتانہ‘ ملک عبدالغفار ڈوگر‘ ایم پی اے حاجی احسان الدین قریشی‘ شیخ طارق رشید‘ رانا محمود الحسن‘ سیکرٹری خوراک پنجاب اسلم کمبوہ‘ کمشنر ملتان سید علی مرتضی‘ آر پی او عامر ملک‘ ڈی سی او ملتان سید گلزار حسین شاہ‘ وہاڑی‘ لودھراں‘ خانیوال کے ڈی سی اوز بھی موجود تھے۔ حمزہ شہباز شریف گزشتہ روز مختصر دورہ پر صبح 10 بجے ملتان پہنچ گئے۔ ایئرپورٹ سے وہ سیدھے سرکٹ ہا¶س گئے۔ حمزہ شہبازنے رمضان بازاروں کا بھی دورہ کیا اور پھر وہاں سے بذریعہ سڑک بہاولپور اور ڈیرہ غازی خان کے دورے کے لئے روانہ ہو گئے۔