ملتان :تعلیمی نصاب سے نظریہ پاکستان کو حذف کیا جا رہا ہے: رائے حق نواز

ملتان :تعلیمی نصاب سے نظریہ پاکستان کو حذف کیا جا رہا ہے: رائے حق نواز

ملتان (نمائندہ نوائے وقت) اسلامی جمعیت طلبہ پنجاب نے صوبائی ترقی میں تعلیم کی اہمیت کو اجاگر کرنے کے لئے” تعمیر ، تعلیم سے“ کے سلوگن سے تعمیر پاکستان مہم کا آغاز کردیا۔ اس مہم کے ذریعے طلبہ کو تعلیمی امور سے آگاہ کرتے ہوئے تعلیمی اداروں میں تعلیمی کلچرکے فروغ کے ذریعے ملک کی تعمیر اور ترقی میں تعلیم کی اہمیت سے آگاہ کیا جائے گا، جبکہ دوسری طرف طلبہ اور ماہرین تعلیم کی آراءپر مبنی سفارشات کو وزارت تعلیم اور حکومت پاکستان کے حوالے کیا جائے گا۔بین الجامعاتی مقابلہ جات، سیمینارزاور کانفرنسز کے ذریعے طلبہ تک رسائی حاصل کی جائے گی جب کہ تعلیمی اداروں میں تعمیری کلچر کو پروان چڑھانے کے لئے طلبہ تنظیمیوں کی سرگرمیوں کو م¶ثر کیا جائے گا ان خیالات کا اظہارناظم اسلامی جمعیت طلبہ پنجاب رائے حق نواز نے ناظم اسلامی جمعیت طلبہ ملتان ڈو ےژن عز ےر خا ن ناظم اسلامی جمعےت طلبہ ملتان معاذ امجد اور ناظم اسلا می جمعےت طلبہ جامعہ زکرےا حسان اخوانی کے ہمراہ پر یس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے مزید کہا کہ تعلیم قومی وحدت میں اہم کردار ادا کرتی ہے، تعلیم کے ذریعے قوم کی ذہنی اور جسمانی نشو و نما ہوتی ہے لیکن بدقسمتی سے پاکستان کا شعبہ تعلیم کوئی متفقہ پالیسی نہ ہونے کی وجہ سے مسائل میں گھرچکا ہے، نصاب تعلیم کے ادبی اور معاشرتی مضامین سے نظریہ پاکستان کے تصور کو بتدریج حذف کیا جا رہا جبکہ سائنسی اور پیشہ ورانہ مضامین میں کسی قسم کی جدت پیدا نہیں کی جا رہی۔ بنیادی اور اعلیٰ تعلیم میںخاطر خواہ حکومتی اقدامات نہ ہونے کو جواز بنا کر غیر ملکی اور غیر سرکاری تنظیموںکےلئے شعبہ تعلیم میںمداخلت کے راستے کھول دئیے گئے جس سے ملک کے نظریاتی تشخص کو شدید نقصانات درپیش ہیں۔ یوں تعلیمی اداروں کا کلچر معاشرتی اور اخلاقی روایات سے دور ہوتا چلا جارہا ہے۔ ملکی ماہرین تعلیم پر انحصار کی بجائے غیر ملکی مشیران تعلیم کے ذریعے تعلیمی اقدامات کو حکومتی تائید حاصل ہے، تعلیم کی نجکار ی اور بورڈ آف گورنر کے قیام اور ذریعہ تعلیم پر متنازعہ اقدامات منظر عام پر آرہے ہیں۔ پاکستان میں بنیادی تعلیمی سے لے کر اعلیٰ تعلیم کا مستقبل حکومتی عدم توجہی کی بنا پر ہمیشہ کی طرح آج بھی ایک سوالیہ نشان ہے۔
رائے حق نواز