سازش کے تحت مسلم ممالک کو غیر مستحکم کیا جا رہا ہے : وزیر خارجہ

ملتان (آن لائن+ آئی این پی+ مانیٹرنگ ڈیسک) وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ کراچی‘ سرحد اور بلوچستان کے حالات میں بیرونی ہاتھ ملوث ہے۔ اندرونی اور بیرونی دشمن پاکستان کا کچھ نہیں بگاڑ سکتے۔ میلی آنکھ سے دیکھنے والوں کو برداشت نہیں کریں گے۔ ہفتے کو ملتان میں شاہ رکن عالم کے عرس کے دورے کے دوران زائرین سے خطاب کرتے ہوئے وزیر خارجہ نے کہا کہ ملک کو اس وقت بڑے چیلنجز کا سامنا ہے‘ دینی اور سیاسی جماعتیں ملک کو بچانے اور بحرانوں سے نکالنے کیلئے کردار ادا کریں۔ انہوں نے کہا کہ دنیا میں پاکستان کاغلط امیج متعارف کرایا جارہا ہے۔ اسلام بچیوں کو تعلیم دینے سے نہیں روکتا‘ سکولوں کو بموں سے اڑانے والے اور بچوں کو کھلونا نما بم سے شہید کرنے والے ملک اور اسلام دشمنوں کے ہاتھوں میں کھیل کردین بدنام کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وقت کا تقاضا ہے کہ قوم متحد ہوکر ملک میں انتشار پھیلانے والے عناصر کا مقابلہ کرے۔ وزیر خارجہ نے کہا کہ پاکستان کا دفاع حکومت‘ افواج اور عوام کرنا جانتے ہیں۔ علاوہ ازیں ملتان میں علماء کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے کہا کہ پاکستان کو بچانے کیلئے اپنا تن من اور دھن قربان کردیں گے جبکہ پاکستان کے استحکام اور اسلام کی بالادستی کیلئے علماء بھی کردار ادا کریں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اپنے معاملات میں کسی بیرونی قوت کی مداخلت برداشت نہیں کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ ملک کے دفاع کی ذمہ داری حکومت ہر صورت پورا کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ آج ملک کے حالات ہم سے مطالبہ کررہے ہیں کہ ہم اپنی صفوں میں اتحاد پیدا کریں۔ بعدازاں زکریا یونیورسٹی میں ایک سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ مسلم ممالک کو غیرمستحکم کرنے کی سازش ہورہی ہے اس لیے ہر دہشت گردی کا تعلق پاکستان سے جوڑا جاتا ہے۔