میں بیف کھاتا ہوں کوئی مجھے روک سکتا ہے؟بھارتی وزیر مملکت کیرن رجیجو کا ساتھی وزیر مختار عباس نقوی کو واضح جواب

میں بیف کھاتا ہوں کوئی مجھے روک سکتا ہے؟بھارتی وزیر مملکت کیرن رجیجو کا  ساتھی وزیر مختار عباس نقوی کو واضح جواب

نئی دہلی (نیٹ نیوز) بھارت کے نائب وزیر داخلہ کیرن ریجیجو نے کہا ہے کہ وہ گائے کا گوشت کھاتے ہیں اور انہیں کوئی بیف کھانے سے نہیں روک سکتا۔ انہوں نے یہ باتیں بی جے پی کے رہنما مختار عباس نقوی کے بیان کے بعد کہی ہیں جس میں نقوی نے کہا تھا کہ جو بیف کھائے بغیر گزارہ نہیں کر سکتے انہیں پاکستان یا عرب ملکوں کو چلے جانا چاہئے۔کیرن ریجیجو نے کہا کہ میرے ساتھ مختار عباس نقوی کا بیان ’بدمزہ‘ ہے۔ ریاست میزو رام کے دارالحکومت ایزول میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ میں گائے کا گوشت کھاتا ہوں۔ میرا تعلق ارونا چل پردیش سے ہے۔ کیا کوئی مجھے روک سکتا ہے؟ اس لئے ہمیں کسی کے طور طریقے کے بارے میں اس قدر تنگ نظر نہیں ہونا چاہئے۔ یہ ایک جمہوری ملک ہے۔ بعض اوقات ایسے بیان دے دیئے جاتے ہیں جو مزیدار نہیں ہوتے۔ انہوں نے کہا کہ اگر مہاراشٹر ایک ہندو اکثریتی ریاست ہے، گجرات میں ہندو اکثریت ہے، مدھیہ پردیش میں ہندو اکثریت ہے اور اگر وہ ہندو عقیدے کے مطابق قانون بنانا چاہتے ہیں تو انہیں بنانے دیں لیکن ہمارے یہاں ہماری ریاست میں ہم اکثریت میں ہیں اور ہم جو اقدام چاہیں اس کے لئے ہم آزاد ہیں۔ انہیں کوئی پریشانی نہیں ہونی چاہیے۔ خیال رہے کہ بھارت کی کئی ریاستوں میں پہلے سے گائے ذبح کرنے پر پابندی ہے لیکن مرکز میں موجودہ بی جے پی حکومت کے آنے کے بعد اس میں سختی آئی ہے۔