لاہور سمیت کئی شہروں میں بارش، چھتیں، آسمانی بجلی گرنے سے خاتون سمیت 3 جاں بحق

لاہور سمیت کئی شہروں میں بارش، چھتیں، آسمانی بجلی گرنے سے خاتون سمیت 3 جاں بحق

لاہور (سپورٹس رپورٹر + نامہ نگار + خبرنگار + نیوز رپورٹر+ وقت نیوز+ نمائندگان) صوبائی دارالحکومت لاہور سمیت پنجاب کے مختلف شہروں میں تیز ہوائوں کے ساتھ ہونے والی مون سون کی پہلی موسلادھار بارش نے گرمی کی شدت کا زور توڑ دیا۔ سڑکوں پر پانی کھڑا ہو گیا جس کی وجہ سے ٹریفک کا نظام بری طرح متاثر ہوا۔ بارش نے رمضان بازار بھی ڈبو دئیے اور دکانداروں کا سجایا سامان خراب ہوگیا۔ بارش اور تیز ہوائوں سے شامیانے اڑ گئے۔ شدید گرمی سے پریشان روزہ داروں نے باران رحمت کے برسنے سے سکھ کا سانس لیا۔ دوسری طرف بارش سے لیسکو کے 85 سے زائد فیڈر ٹرپ گئے جبکہ متعدد علاقوں میں ٹرانسفارمر جل گئے۔ تاہم رات گئے تک فیڈرز کی مرمت کرکے متعلقہ علاقوں کی بجلی بحال کردی گئی۔ مختلف مقامات پر بارش کے باعث گھروں کی چھتیں اور سائن بورڈ گرنے سے ایک خاتون جاں بحق جبکہ 11 افراد زخمی ہو گئے جبکہ دو افراد کی حالت نازک بتائی جاتی ہے۔ مانگا منڈی کے علاقہ میں ایک گھرکی بوسیدہ چھت گرنے سے ملبے تلے دب کر گھر کی مالکہ عشرت جاں بحق اور اسکے دو عزیز فرقان اور جلال زخمی ہو گئے۔ ہنجروال میں گھرکی دیوار گرنے سے 2 افراد 30 سالہ طارق اور ظفر زخمی ہو گئے۔ ریس کورس اورملتان روڈ پر سائن بورڈ گرنے سے راہگیر تنویر وغیرہ تین افراد زخمی ہو گئے۔ شادی پورہ میں لیاقت کے گھر کی بوسیدہ چھت اچانک زورداردھماکے سے گر گئی جس سے ملبے تلے دب کر 4 افراد لیاقت علی، فیصل وغیرہ زخمی ہو گئے۔ دوسری طرف وزیراعلیٰ شہباز شریف نے ضلعی انتظامیہ اور متعلقہ اداروںکو نشیبی علاقوں سے بارش کے پانی کی فوری نکاس کی ہدایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ نکاسی آب کیلئے تمام وسائل بروئے کار لائے جائیںجبکہ ٹریفک رواں دواں رکھنے کے حوالے سے بھی تمام ضروری اقدامات کئے جائیں۔محکمہ موسمیات کے مطابق منگل سے جمعرات کے دوران کشمیر، راولپنڈی، گوجرانوالہ، لاہور، فیصل آباد، ڈی جی خان، ساہیوال، بہاولپور، ملتان، سرگودھا ، حافظ آباد، قصور، نارووال، اسلام آباد، خیبر پی کے اور فاٹا میں کہیں کہیں جبکہ شمال مشرقی بلوچستان اور گلگت بلتستان میں چند مقامات تیز گرد آلود ہوائوں اور گرج چمک کیساتھ مزید بارشوں کا امکان ہے۔ پھولنگر کے نواح بلوکی میں بارش اور آندھی سے دو گھروں کی چھتیں گر گئیں جس سے دو افراد زخمی ہو گئے۔ شیخوپورہ نشیبی علاقوں میں پانی کھڑا ہو گیا۔ حافظ آباد کے نواحی گائوں مانگٹ نیچا میں آسمانی بجلی گرنے سے دو نوجوان جاں بحق جبکہ دو زخمی ہو گئے زخمیوں کو ریسکیو ٹیموں نے ڈسٹرکٹ ہسپتال منتقل کردیا۔ علاوہ ازیں دریائے سندھ میں غازی گھاٹ ڈی جی خان کے مقام پر تیز بارش سے دریامیں درمیانے درجے کا سیلاب ہے تاحال کوئی امدادی سرگرمیاں شروع نہیں ہوئیں، سینکڑوں ایکڑ اراضی زیرآب آگئی، لوگوں نے نقل مکانی شروع کردی ہے۔