سیالکوٹ: بیوی اور بیٹی کو فروخت کرنیوالا ملزم اور خریدار گرفتار

سیالکوٹ: بیوی اور بیٹی کو فروخت   کرنیوالا ملزم اور خریدار گرفتار

سیالکوٹ (نامہ نگار) بیوی اور اڑھائی سالہ بیٹی کو 25 ہزار روپے میں فروخت کرنے کے واقعہ میں سنسنی خیز انکشافات ہوئے ہیں جبکہ بیوی اور بیٹی کو فروخت کرنے والا نعیم خالد اور خریدار ذوالفقار کو گرفتار کرکے ان کیخلاف مقدمہ درج کرلیا گیا ہے اور ملزمان کو گزشتہ روز جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا گیا ہے۔ بتایاگیا ہے کہ سبز کوٹ کے رہائشی نعیم خالد جاوید نے دوران ملازمت کراچی کے رہائشی خورشید سے اسکی بہن صائقہ کا سودا اسی ہزار روپے میں طے کیا اور اس سے شادی کر کے سیالکوٹ واپس اپنے گائوں آگیا جہاں سات سال تک میاں بیوی ایک ساتھ مقیم رہے اور انکے ہاں ایک بیٹی لائبہ پیدا ہوئی تاہم گذشتہ دنوں نعیم خالد جاوید گائوں گائوں لوگوں سے کہتا رہا کہ وہ اپنی بیوی کو اسی ہزار روپے میں کراچی سے لایا تھا اگر کوئی خریدار ہو تو رابطہ کرے اس دوران سبز کوٹ کے رہائشی افراد نے خاتون کی قیمت پانچ ہزار لگایا لیکن نام نہاد شوہر نے انکار کر دیا بعد ازاں متعدد افراد نے خاتون کو دیکھا اور اسکی قیمت پندرہ سے بیس ہزار روپے تک لگایا دوسری طرف گمھنال کے رہائشی لیاقت علی،بھولا،مشتاق اور امین نمبردار نے اپنے ہی گائوں کے ذوالفقار علی کو بتایا کہ ہمسایہ گائوں کے رہائشی نعیم خالد اپنی بیوی کو فروخت کرنا چاہتا ہے لہذا تم اسے خرید لو اور اس سے شادی کر لو جس پر ذوالفقار نے خاتون کو دیکھ کر پنچائیت میں اسکی قیمت بیس ہزار روپے لگائی لیکن نعیم خالد اتنی کم رقم پر فروخت کرنے سے انکار کرتا رہا اور بعد ازاں اس بات پر پچیس ہزار روپے میں سودا طے پایا کہ صائقہ کے ساتھ ساتھ اسکی اڑھائی سالہ بیٹی لائبہ کو بھی فروخت کیا جائے تو وہ پچیس ہزار روپے ادا کر دے گا جس پر نمبردار امین نے خواتین کی فروخت کے سودا کو حتمی شکل دے دی، نمبردار امین نے پیسے اپنے پاس رکھ کر کے صائقہ اور اسکی بیٹی لائبہ کو سات روز قبل ذوالفقار کے سپرد کر دیا اور فیصلہ سنایا کہ نعیم خالد اپنی بیوی کو طلاق دے گا اور طلاق موثر ہونے کے بعد ذوالفقار اس سے شادی کرے گا۔اس واقعہ کا علم پولیس تھانہ سبز پیر نے کارروائی کرتے ہوئے ملزمان نعیم خالد جاویداور ذوالفقار کو گرفتار کر لیا اور انکے قبضہ سے فروخت کی گئی صائقہ اور لائبہ کو بازیاب کروا لیا تاہم نمبردار امین انیس ہزار امانت رکھے گئے اور دیگر ملزمان پولیس کے حرکت میں آنے سے گائوں سے فرار ہو گئے پولیس نے ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے۔دریں اثناء سب انسپکٹر نذیر نے ملزمان نعیم خالد اور ذوالفقار کو مقامی سول جج ندیم یوسف وڑائچ کی عدالت میں پیش کیا جس پر عدالت نے دونوں ملزمان کو جوڈیشنل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا جبکہ صائقہ بی بی کے بیان کروانے کیلئے صاعقہ بی بی کو سپیشل مجسٹریٹ کی عدالت میں پیش کرنے کا حکم دیا ہے۔