اوکاڑہ: انجمن مزارعین کا صدر قتل کیس میں گرفتار، سینکڑوں افراد کا مظاہرہ، تمام سڑکیں بلاک

اوکاڑہ+ رینالہ خورد (نامہ نگار+ نمائندہ خصوصی+ آن لائن) اوکاڑہ پولیس نے گذشتہ روز ڈی پی او اوکاڑہ کی قیادت میں چھاپہ مار کر انجمن مزارعین پنجاب کے سینئر نائب صدر چودھری اشرف ندیم کو مقدمہ قتل میں گرفتار کر لیا جس کے خلاف مزارعین نے احتجاج کرتے ہوئے جی ٹی روڈ سمیت پورے ضلع میں ٹریفک بلاک کر دی۔ سات گھنٹے مسلسل ٹریفک بلاک رہنے سے ساہیوال اور لاہور، فیصل آباد سے اوکاڑہ،پاکپتن سے دیپالپورکے مابین زمینی رابطہ منقطع ہو گیا۔ گاڑیوں کی میلوں لمبی لائینں لگنے سے مسافروں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔ بعدازاں ڈی سی او اوکاڑہ اور مزارعین رہنمائوں کے مابین ایک گھنٹے مذاکرات کے بعد احتجاج ختم کر دیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق انجمن مزارعین پنجاب کے نائب صدر چودھری ندیم اشرف پر ایک اشتہاری اکرم عرف اکری کے قتل کا مقدمہ درج ہے اور اسے عدالت سے اشتہاری قرار دیا جا چکا ہے۔ لاہور ہائیکورٹ نے ملزم کی گرفتاری کے لئے ضلعی پولیس کو احکامات صادر کر رکھے ہیں جس پر گزشتہ رات پولیس نے رینالہ اسٹیٹ کا گھیرائو کرتے ہوئے ندیم اشرف کو گرفتار کر لیا۔ اطلاع ملتے ہی سینکڑوں مزارعین نے احتجاج کرتے ہوئے ضلع بھر کے داخلی اور خارجی راستوں پر دھرنے دیدیئے اور ٹریفک مکمل بند کر دی، مزارعین نے مین جی ٹی روڈ، دیپالپور پاکپتن روڈ، فیصل آباد روڈ سمیت رینالہ بائی پاس کو بھی مکمل بند کر دیا جس سے گاڑیوں میں پھنسے مسافروں کی مشکلات میں اضافہ ہو گیا۔ بعدازاں ڈی سی او قیصر سلیم، ڈی پی او رانا فیصل نے انجمن مزارعین پنجاب کے سیکرٹری جنرل مہر عبدالستار کی قیادت میں رہنمائوں سے مذاکرات کئے اور یقین دہانی کرائی کے ناجائز گرفتاریاں نہیں کی جائیں گی اور میرٹ پر تفتیش ہو گی جس کے بعد مزارعین منتشر ہو گئے۔ دریں اثناء ڈی پی او رانا محمد فیصل نے صحافیوں کو بتایا کہ انجمن مزارعین کے صدر اشرف ندیم کے خلاف  اوکاڑہ ضلع  کے مختلف تھانوں میں18مقدمات درج ہیں جن میں انسداد دہشت گردی ایکٹ کے دو جبکہ قتل کی دفعات کے چار مقدمات شامل ہیں۔ ڈی پی او نے بتایا کہ ملزم کی گرفتاری پولیس کے لئے ایک چیلنج تھی۔