وزیرستان میں 2 ڈرون حملے‘ 6 غیرملکیوں سمیت 13 افراد جاں بحق‘ متعدد زخمی

وزیرستان میں 2 ڈرون حملے‘ 6 غیرملکیوں سمیت 13 افراد جاں بحق‘ متعدد زخمی

پشاور+ شوال( نیوزایجنسیاں+ نوائے وقت رپورٹ) وزیرستان میں 2 امریکی ڈرون حملوں میں6 غیرملکیوں سمیت 13افراد جاں بحق، متعدد زخمی ہو گئے۔ ذرائع کے مطابق شمالی وزیرستان کی وادی شوال میں امریکی ڈرون طیارے نے ایک گھر پر دو میزائل داغے جس کے نتیجے میں گھر میں موجود 7 افراد جاں بحق ہوگئے۔ مقامی ذرائع کے مطابق حملے میں گھر مکمل طور پر تباہ ہوگیا اور ملبے کو ہٹا کر نعشیں نکالی گئیں۔ ڈرون حملے کے بعد علاقے میں ڈرون طیاروں کی پروازیں جاری رہیں جس سے خوف و ہراس پھیل گیا۔ پولیٹیکل انتظامیہ نے امریکی ڈرون حملے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ حملے میں دہشت گردوں کے زیر استعمال ایک کمپائونڈ کو نشانہ بنایا گیا۔ مارے جانے والوں میں غیر ملکی بھی شامل ہیں تاہم ان کی قومیت کی فوری طور پر شناخت نہیں ہوئی۔ دوسری جانب جنوبی وزیرستان کے علاقے اچت درہ میں بھی امریکی ڈرون حملہ کیا گیا جس میں 6افراد جاںبحق اور متعدد زخمی ہو گئے۔ امریکی جاسوس طیارے نے ایک گھر پر دو میزائل فائر کئے جس سے 5 افراد جاںبحق اور متعدد زخمی ہو گئے۔ جنوری میں ہونے والے حملوں کی تعداد 4 ہو گئی ہے۔ بی بی سی کے مطابق 2015 ء کے آغاز کے بعد پاکستان کے قبائلی علاقوں میں ہونے والا یہ دوسرا بڑا ڈرون حملہ ہے۔ اے ایف پی کے مطابق سکیورٹی حکام کے مطابق مرنے والوں میں 2 ازبک باشندے شامل تھے۔