دھاندلی زدہ انتخابات تسلیم کر کے بڑی غلطی کی: یوسف رضا گیلانی

دھاندلی زدہ انتخابات تسلیم کر کے  بڑی غلطی کی: یوسف رضا گیلانی

ساہیوال (نامہ نگار+ آئی این پی) پیپلز پارٹی کے وائس چیئرمین اور سابق وزیراعظم  سید یوسف رضا گیلانی نے کہا ہے ملک میں دہشت گردی کے سلسلہ میں جب پہلی دفعہ اے پی سی ہوئی تو ہم نے میاں نواز شریف کو مکمل طور پر فری ہینڈ دیا تھا لیکن اُنہوں نے فیصلے کرتے کرتے ڈیڑھ سال لگا دیا اس عرصہ میں دہشت گردوں نے جڑیں پکڑ لیں اب پھر ہم نے محترمہ بے نظیر بھٹو کے جمہوری ویژن ملکی استحکام کے لئے ملٹری کورٹس اور دہشت گردی کے خاتمہ کے لئے دوبارہ حکومت کو فری ہینڈ دیا ہے ۔وہ پیپلز پارٹی ضلع ساہیوال کے صدر ذکی چودھری کی رہائشگاہ پر اُن کے والد مرحوم کے ایصال ثواب کے موقع پر اخباری نمائندوں سے بات چیت کر رہے تھے ۔ اُنہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی پارلیمنٹ میں دوسری بڑی جماعت ہے اور سینٹ میں بھی اس وقت اکثریتی جماعت ہے ۔ آئندہ انتخابات میں پیپلز پارٹی ایک فعال سیاسی جماعت کے طور پر اُبھرے اور بھاری اکثریت سے کامیابی حاصل کرے گی ۔ سزائے موت کے فیصلے کے متعلق ایک سوال کے جواب میں اُنہوںنے کہا  ہمارے دور میں جب سزائے موت پر پابندی لگائی گئی تھی اُس وقت عالمی سطح پر یہ مسئلہ اُٹھایا گیا تھا اور بعض حالات کو مد نظر رکھتے ہوئے سزائے موت پر پابندی لگائی گئی تھی ۔ اب عالمی سطح پر حالات بدل چکے ہیں دہشت گردوں کو اپنے انجام تک پہنچانے کے لئے سزائے موت کی بحالی ضروری تھی اس لئے پیپلز پارٹی نے اُس کی حمایت کی۔ یوسف رضا گیلانی نے کہا ہے کہ ہم نے 2013 کے دھاندلی زدہ انتخابات کے نتائج کو فوری طور پر تسلیم کر کے بڑی غلطی کی تھی میں نے عمران خان سے الیکشن کے بعد ہونے والی ملاقات میں اس بات کا اظہار کیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ پیپلزپارٹی نے دھاندلی زدہ الیکشن کو صرف جمہوریت کو ڈی ریل ہونے سے بچانے کی خاطر قبول کر لیا۔ عمران خان کا دھاندلی کی تحقیقات کیلئے کمیشن کے قیام کا مطالبہ درست ہے آزاد جوڈیشل کمیشن قائم ہونا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ میرے بیٹے حیدر کو اغوا کرنے والے ملزمان کی گرفتاری لگتا ہے موجودہ حکمرانوں کے بس کی بات نہیں ہے۔ انہوں نے کہا بلاول اور سابق صدر آصف زرداری کے درمیان اختلافات کو ڈس انفارمیشن قرار دیا اور آصفہ بھٹو کو پا رٹی کا چیئرمین بنانے کی اطلاع کو بھی ڈس انفارمیشن کا حصہ قرار دیا۔ انہوں نے ضلعی صدر ذکی چودھری کے والد کی وفات پر فاتحہ خوانی بھی کی۔