فاٹا ٹربیونل کمشن نے ڈاکٹر شکیل آفریدی کیس کا فیصلہ محفوظ کر لیا، 15 مارچ کو سنایا جائیگا

پشاور (اے پی اے + آئی این پی) فاٹا ٹربیونل کمشن نے ڈاکٹر شکیل آفریدی کیس سے متعلق اپنا فیصلہ محفوظ کر لیا جو 15 مارچ کو سنایا جائے گا۔ سماعت کے موقع پر استغاثہ اور دفاع نے عدالت میں اپنے دلائل مکمل کئے۔ اس موقع پر ڈاکٹر شکیل آفریدی کے وکیل نے عدالت سے اپنے مؤکل کے خلاف سزا اور عدالتی فیصلے کو کالعدم قرار دینے کی درخواست کی۔ مقدمے کی سماعت کمشنر ایف سی آر منیر اعظم نے کی۔ علاوہ ازیں ڈاکٹر شکیل آفریدی کے بھائی جمیل آفریدی نے کہا ہے کہ شکیل آفریدی کیساتھ انصاف کیا جائے۔ پشاور میں کمشنر ایف سی آر کی عدالت میں کیس کی سماعت کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے جمیل آفریدی نے کہاکہ ان کی شکیل آفریدی سے ملاقات نہیں کرائی جا رہی۔ جمیل آفریدی کے مطابق ڈاکٹر شکیل آفریدی کو23 مئی 2010 ء کو گرفتار کیا گیا اور بغیر کسی کارروائی یا جرگے کے انہیں 33 سال قید کی سزا سنا دی گئی جو ناانصافی ہے۔