حکومت طالبان مذکرات کا جوش آہستہ آہستہ مایوسی میں بدل رہا ہے: اعجاز الحق

اوکاڑہ (ثناء نیوز) مسلم لیگ ضیاء کے سربراہ و رکن قومی اسمبلی اعجاز الحق نے کہا ہے کہ طالبان اور حکومت کے مذاکرات کا جوش آہستہ آہستہ مایوسی میں بد ل رہا ہے۔ میرے خیال میں فوج انتظار کر رہی ہے کہ حکومت کیا فیصلہ کرتی ہے اس سلسلہ میں سیاست دانوں کو سیاسی حل کیلئے وقت دیا جا رہا ہے۔ حکومت کے ساتھ خود طالبان آمنے سامنے بیٹھ کر مذاکرات کریں تو بہتر نتائج نکل سکیں گے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ہارون آباد سے اسلام آباد جاتے ہوئے اوکاڑہ کے صحافیوں سے خصوصی بات چیت کر تے ہوئے کیا۔ اعجاز الحق نے کہا کہ گزشتہ45دنوں میں 46دہشتگرد حملے ہوئے جس کی وجہ سے عوام میں مذاکرات کے حوالے سے جو سکون کی کیفیت پائی جانے لگی تھی اس کو دھچکا لگا ہے ۔ مذاکرات کو نتیجہ خیز بنانا بڑا ہی مشکل کام ہے اس کیلئے دونوں طرف سے سنجیدہ کوششوں کی ضرورت ہے ۔  ایک سوال کے جواب میں اعجاز الحق نے کہا کہ عمران خان کو اِ ن کیمرہ سیشن میں ہونیوالی وزیراعظم کی گفتگو کو میڈیا کے سامنے نہیں لانا چاہئے تھا ایسی گفتگو سے پرہیز کیا جانا چاہئے جس سے ملکی مفاد کے معاملات کو نقصان پہنچتا ہو۔